لاہور ڈیفنس دھماکہ کی شہری نے 11جنوری کو نشاندہی اور پیش گوئی کر دی تھی اس کے باوجود روکا کیوں نہ جا سکا؟جان کر آپ بھی اپنا سر پیٹ لیں گے

  ہفتہ‬‮ 25 فروری‬‮ 2017  |  12:19

 اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان شہری نے 11جنوری کو ڈیفنس دھماکے کی پیش گوئی کر دی تھی مگر حکومت نے کوئی بھی اقدام نہ کیا جس سے قیمتی جانیں اور املاک بچ سکتیں۔ تفصیلات کے مطابق لاہور کے علاقے ڈیفنس زیڈ بلاک میں 23فروری بروز جمعرات ہونے والے دھماکے کی پیش گوئی ارسلان سعید نامی شہری نے سوشل میڈیاپر 11جنوری کو ہی کر دی تھی۔ارسلان سعید نے زیڈ بلاک کے ایک نجی ریسٹورنٹ کے سامنے بجلی کے کھمبوں کے عین نیچے سر عام پڑے گیس سیلنڈر کی تصاویر سوشل میڈیا پر شیئر کرتے ہوئے ان پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ’’یہ


ایک انتہائی خطرناک چیز ہے جو کہ کھلے عام بجلی کے کھمبوں کے نیچے پڑی ہوئی ہے جس کی وجہ سے کوئی بھی اندوہناک واقعہ پیش آسکتا ہےجبکہ سکیورٹی اور متعلقہ ادارے اس سے غافل ہیں‘‘۔شہری کی سوشل میڈیا پر شیئر کی جانے والی تصاویر پر نجی ریسٹورنٹ کے مالک نے ردعمل دیتے ہوئے کہا تھا کہ آئندہ اس قسم کی غفلت کا مظاہرہ نہیں کیا جائے گا تاہم دھماکہ ہو گیا اور اس کی تحقیقات جاری ہیں جبکہ ابتدائی تحقیقات کے مطابق دھماکہ گیس لیکج اور مبینہ غفلت کے باعث پیش آیا جس پر صوبائی وزیر قانون رانا ثنا نے غیر معیاری سیلنڈر فراہم کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا بھی عندیہ دیا ہے۔[caption id="attachment_243340" align="aligncenter" width="800"]lahore blast شہری ارسلان سعید کی جانب سے سوشل میڈیا پر پوسٹ کی گئی تصویر جس میں گیس سیلنڈرز سر عام بجلی کے کھمبوں کے نیچے پڑے ہیں[/caption]

موضوعات:

loading...