صنفی امتیاز راتوں رات ختم نہیں ہوسکتا،اداکارہ املیا کلیرک

  جمعرات‬‮ 17 مئی‬‮‬‮ 2018  |  11:10

نیویارک (این این آئی)گیمز آف تھرون کی اداکارہ املیا کلیرک نے کہا صنفی امتیاز راتوں رات ختم نہیں ہوسکتاہے تاہم امتیاز کے خلاف مہمات ضرور جاری رہینگی۔اداکارہ جو کہ کینز فلم فیسٹیول میں اسٹار وارز سیریز کی نئی فلم کی تشہیر کررہی ہے کہا کہ صنفی امتیازکو ختم کرنابہت مشکل ہے چونکہ یہ ہمیشہ سے ہے لہذا یکدم راتوں رات اسے ختم کرنا ناممکن ہے۔انھوں نے کہا اگر خواتین اپنے تئیں مناسب دباؤجاری رکھیں تومہم جاری رہ سکتی ہے۔املیا کلیرک جوکہ زندگی کی 31بہاریں دیکھ چکی ہیں، ان کی اسٹار وارز سلسلے کی نئی فلم سولو کی نمائش کینز فلم فیسٹول

میں کی گئی۔اداکارہ ہالی ووڈ میں جنس عمل دخل پر بہت منہ پھٹ رہی ہے۔ مہم کے بارے میں انھوں نے کہا ایک مباحثے سے کوئی رجحان ختم نہیں ہوسکتاہے۔ تاہم ہستہ آہستہ مستقل کوششوں سے چیزیں تبدیل ہونا شروع ہوتی ہیں۔ان کاکہناتھا کہ بحیثیت لڑکی میں نے کبھی نہیں سوچاکہ کچھ میں کرنا چاہتی ہوں اور نہ کرسکوں۔اداکارہ کی پہلی کامیابی ٹی وی چینل ایچ بی او کی تیارکردہ سیریز گیمز آف تھرون تھی۔انھوں نے بتایااس سیریز میں ان کی اور دوسرے مرد اداکاروں کی معاوضے ایک جیسے تھے۔اداکارہ کاکہناتھا کہ جب انھوں نیفلموں میں کام کرناشروع کیاتو انھیں صنفی امتیاز کااحساس ہونا شروع ہوا اور جب اس کے خلاف می ٹو تحریک شروع ہوئی تو معاملات میں ڈرامائی تبدیلی آنا شروع ہوگئی۔انھوں نے امریکی اداکارہ فرانسسز میکڈارمنٹ کی فلموں میں کاسٹ اور عملے میں متنوع بنانے کیلیے کوٹہ نافذکرنے کے مطالبے کی حمایت کی ہے۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں