عمران خان کا شیخ رشید کو وزیر ریلوے بنانے کا فیصلہ غلط ثابت،بات استعفے تک جا پہنچی

  جمعرات‬‮ 11 جولائی‬‮ 2019  |  13:52

کراچی ،لاہور (آن لائن) اکبرایکسپریس  ٹرین حادثے پر سندھ کے وزیر ٹرانسپورٹ اویس شاہ نے وزیر ریلوے شیخ رشید سے استعفیٰ کا مطالبہ کر دیا۔وزیرٹرانسپورٹ سندھ اویس شاہ نے ٹرین حادثے میں متعدد افراد کے جاں بحق ہونے پر گہرے دکھ و افسوسکا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جب سے شیخ رشید کو ریلوے کی وزارت ملی ہے تب سے 10 سے زائد بڑے حادثے ہوچکے ہیں، پہلے اتنے حادثے نہیں ہوتے تھے اب کیوں ہو رہے ہیں اسکی تحقیقات کرائی جائے۔وزیرٹرانسپورٹ نے کہا شیخ رشید صاحب خدا کا واسطہ ہے وزارت چھوڑدیں آپ کی وجہ سے حادثے ہو


رہے ہیں، شیخ رشید مزید ریلوے کے وزیر رہے تو ریلوے پشاور میٹرو جیسا منظر دینے لگے گا۔ ان کہنا تھا کہ وزیراعظم صاحب اپنے چپڑاسی سے وزارت واپس لیں اور کسی دوسرے کو وزیر بنائیں۔دوسری جانب گورنر سندھ عمران اسماعیل اور وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ نے بھی ٹرین حادثے میں انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے دریں اثنا وزیر ریلوے شیخ رشید سے استعفے کے مطالبے کی قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع کرا دی گئی۔ قرارداد مسلم لیگ ن کی رکن کنول لیاقت نے جمع کروائی۔قرارداد کے متن میں کہا گیا ہے کہ اکبر ایکسپرس حادثے میں 11 قیمتی جانوں کا ضیاع اور 60 سے زائد زخمی ہوئے، حادثہ وزیر ریلوے کی لاپرواہی اور محکمہ سے غیر سنجیدگی کا منہ بولتا ثبوت ہے، آئے دن ہونے والے حادثات اور قیمتی جانوں کا ضیاع باعث تشویش ہے۔قرارداد میں مطالبہ کیا گیا کہ وزیر ریلوے شیخ رشید اپنے عہدے سے استعفیٰ دیں، بصورت دیگر وفاقی حکومت وزیر موصوف سے فی الفور وزارت واپس لے۔

موضوعات:

loading...