آپ کا حسن قدرتی ہے یا کسی کریم کا کمال ہے؟ صحافی کا زرتاج گل سے سوال، وفاقی وزیر کے جواب نے صحافیوں کو بھی حیران کر دیا

  جمعرات‬‮ 29 اکتوبر‬‮ 2020  |  20:30

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر ماحولیات زرتاج گل لاہور میں میڈیا نمائندوں سے بات چیت کر رہی تھیں، اس دوران ایک صحافی نے ان سے سوال کیا کہ آپ کی خوبصورتی کی کیا وجہ ہے، کیا آپ اس کے لئے کوئی کریم استعمال کرتی ہیں یا پھر کوئی اور وجہ ہے، اس سوال پر وفاقی وزیر شرما گئیں اور اپنی خوبصورتی کی وجہ بھی بیان کر دی۔ انہوں نے مسکراتے ہوئے کہا کہ دنیا میںتمام لوگوں کو اللہ تعالیٰ نے خوبصورت بنایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ چونکہ وہ قبائلی اور پشتون ہیں اس وجہ سے وہ زیادہ خوبصورت ہیں


لیکن باقاعدہ الیکشن جیت کر آئی ہوں تو اس پریکٹیکل سیاست اور دھوپ گرمی اورسموگ کے بعد اب اتنا ہی حسن بچا ہے جو آپ دیکھ رہے ہیں۔ زرتاج گل نے کہا کہ اب تو میری کلاس فیلوز بھی مجھے نہیں پہچانتے کہ یہ وہی زرتاج گل ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کی یہ خوبصورت اب ماند پڑ گئی ہے، زرتاج گل نے کہا کہ وہ اس سے بھی زیادہ خوبصورت تھیں۔ وزیرمملکت زرتاج گل نے انکشاف کیا ہے کہ وہ پشتون ہونے کی وجہ سے چینی کا بہت زیادہ استعمال کرتی تھیں اور ایک وقت میں 3 سے 4 چمچ چینی چائے میں پیتی تھیں۔امراض قلب سے بچاو میں خواتین کے کردار سے متعلق سیمینار سے خطاب میں انہوں نے کہا کہ چینی،سافٹ ڈرنکس دل کی بیماریوں میں بڑا کردار ادا کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ 'پشتون ہوں تو چینی کا استعمال بہت زیادہ کرتی تھی،میں 3 سے 4 چمچ چینی چائے میں پیتی تھی اوراب ایک سے 2 چمچ پیتی ہوں۔ان کا کہنا تھا کہ اکتوبر کے مہینے میں چھاتی کینسر کے حوالے سے آگہی کاکام کیاجارہا ہے جب کہ جلد گورا کرنے والی کریموں پر آگہی بھی شروع کی ہے۔دوسری جانب گزشتہ دنوں وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل کا ایک انٹرویو سوشل میڈیا پر خو ب وائرل ہوا جس میں انہوں نے شادی کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ ارینج نہیںبلکہ محبت کی شادی کرنی چاہیے،دونوں صورتوں میں تباہ تو ہونا ہی ہے۔زرتاج گل سمجھتی ہیں کہ بہتر یہی ہے کہ انسان لو میرج کر کے تباہ ہو۔زرتاج گل نے مزید سوالوں کے دلچسپ جوابات دیتے ہوئے بتایا کہ کوئی بھی لیڈر منافق یا بزدل نہیں ہو سکتا اور انہیں فخر ہے کہ ان کا لیڈر بزدل اور منافق نہیں ہے، یہ عمران خان کی عادت انہیں بہت پسند ہے۔میزبان نے ان سے پی ٹی آئی کے بعددو بڑی سیاسی جماعتوں میں سے ایک چننے کو کہا گیا جس میں سے انہوں نے پی پی پی کو مسلم لیگ ن سے بہتر قرار دیا۔وزیر مملکت زرتاج گل نے اپنی پسندیدہ غذاکے بارے بتاتے ہوئے کہا کہ مجھے ابلا ہوا انڈہ، پشاوری چپلی کباب اور سبز چائے بہت پسند ہیں۔واضح رہے کہ زرتاج گل اکثر اپنےبیانات کی وجہ سے خبروں کی زینت بنتی رہتی ہیں، اس سے پہلے بھی زرتاج گل نے سوشل میڈیا پر اپنا مذاق بنوالیاتھا۔زرتاج گل کو یہ تک معلوم نہیں کہ 17 اگست 1988 کو ضیا الحق کی ایک طیارہ حادثہ میں موت ہوئی تھی اور زرتاج گل 17 اگست کو ضیا الحق کا یوم پیدائش سمجھتی رہیں۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

بڑے چودھری صاحب

انیس سو ساٹھ کی دہائی میں سیالکوٹ میں ایک نوجوان وکیل تھا‘ امریکا سے پڑھ کر آیا تھا‘ ذہنی اور جسمانی لحاظ سے مضبوط تھا‘ آواز میں گھن گرج بھی تھی اور حس مزاح بھی آسمان کو چھوتی تھی‘ یہ بہت جلد کچہری میں چھا گیا‘ وکیلوں کے ساتھ ساتھ جج بھی اس کے گرویدا ہو گئے‘ اس ....مزید پڑھئے‎

انیس سو ساٹھ کی دہائی میں سیالکوٹ میں ایک نوجوان وکیل تھا‘ امریکا سے پڑھ کر آیا تھا‘ ذہنی اور جسمانی لحاظ سے مضبوط تھا‘ آواز میں گھن گرج بھی تھی اور حس مزاح بھی آسمان کو چھوتی تھی‘ یہ بہت جلد کچہری میں چھا گیا‘ وکیلوں کے ساتھ ساتھ جج بھی اس کے گرویدا ہو گئے‘ اس ....مزید پڑھئے‎