نوازشریف فراڈ سے باہر گئے،عدالتی فیصلے سے تصدیق ہوگئی

  بدھ‬‮ 16 ستمبر‬‮ 2020  |  0:16

اسلام آباد ( آن لائن ) وفاقی وزیر وزارت سائنس اینڈٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ عدالتی فیصلے سے نوازشریف کے فراڈ کی تصدیق ہوگئی، اسلام آباد ہائیکورٹ کا نوازشریف سے متعلق آج کا فیصلہ خوش آئندہ ہے،عدالت نے آج ٹرائل کورٹ کا فیصلہ برقرار رکھا۔ تفصیلات کے مطابق وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی اور سی ڈی اے کے درمیان الیکٹرک گاڑیاں چلانے کے معاہدے پر دستخط ہوگئے۔ وفاقی وزیر فواد چودھری نے کہا کہ اگلے تین چار میں تمام پبلک ٹرانسپورٹ کو الیکٹرک ٹرانسپورٹ میں تبدیل کردیں گے۔ اسلام آباد میں 10سال میں ٹرانسپورٹ الیکٹرک پر چلی جائے گی۔


25 فیصد ماحولیاتی آلودگی ٹرانسپورٹ کے دھوئیں سے آتی ہے۔ فواد چوہدری نے چند روز قبل بھی کہا تھا کہ سی ڈی اے کے ساتھ مل کر اسلام ا?باد کو پہلا الیکٹرک وہیکل والا شہر بنائیں گے۔آنے والا دور بغیر ڈرائیور کے کاروں کا ہے،الیکٹرک وہیکلز کے ٓنے سے بیروزگاری کا خطرہ بھی پیدا ہو جائیگا۔ ان مکینکس کو ہمیں الیکٹرک وہیکلز کی مرمت کے لیے جدید تربیت فراہم کرنی ہوگی،گاڑیوں کی بہتری کی بات کرو تو پاپام والے ہنگامہ کھڑا کر دیتے ہیں،ایسا نہیں ہونے دینگے کہ دنیا سے کٹ کر دنیا کے معیار پر اپنا ماڈل نا بنائیں،انڈسٹری کی بہتری کے حکومت پر انحصار کو ختم کرنا ہوگا۔لیتھیم بیٹری بنانا پاکستان کے لیے بہت ضروری ہے،جے ایف تھنڈر اور الخالد بنا سکتے ہیں مگر ہم گاڑیاں نہیں بناتے اور موبائل فون اور ٹی ویز نہیں بنا سکتے انہوں نے کہا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوازشریف سے متعلق جو فیصلہ کیا خوش آئندہ ہے۔ عدالت نے آج ٹرائل کورٹ کا فیصلہ برقرار رکھا، اس بات کی تصدیق ہوئی کہ نوازشریف فراڈ کرکے بیرون ملک گئے۔ واضح رہے اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق وزیر اعظم نوازشریف کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست مسترد کردی، عدالت نے نوازشریف کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری بھی جاری کردیے، وارنٹ گرفتاری 22 ستمبر تک کیلئے جاری کیے گئے ہیں۔


زیرو پوائنٹ

سرعام پھانسی

مجھے چند سال پہلے اپنے ایک دوست کے ساتھ اس کے گاﺅں جانے کا اتفاق ہوا‘ یہ پنجاب کے ایک مشہور گاﺅں کے چودھری ہیں‘ میں ان کے مہمان خانے میں ٹھہرا ہوا تھا‘ سردیوں کے دن تھے‘ میں صبح اٹھا تو مہمان خانے کے صحن میں پنچایت ہو رہی تھی‘میں نے کھڑکی کھولی اور کارروائی دیکھنے لگا‘ ....مزید پڑھئے‎

مجھے چند سال پہلے اپنے ایک دوست کے ساتھ اس کے گاﺅں جانے کا اتفاق ہوا‘ یہ پنجاب کے ایک مشہور گاﺅں کے چودھری ہیں‘ میں ان کے مہمان خانے میں ٹھہرا ہوا تھا‘ سردیوں کے دن تھے‘ میں صبح اٹھا تو مہمان خانے کے صحن میں پنچایت ہو رہی تھی‘میں نے کھڑکی کھولی اور کارروائی دیکھنے لگا‘ ....مزید پڑھئے‎