حج فارم میں ختم نبوت ؐ کے حلف نامے کا خاتمہ، فارم سے ختم نبوت کونکالنا دنیا کے تمام مسلمانوں کی دل آزادی ہے، جماعت اسلامی قومی اسمبلی میں ڈٹ گئی

  جمعہ‬‮ 28 فروری‬‮ 2020  |  18:24

کوئٹہ(آن لائن) جماعت اسلامی کے سینیٹر وخیبر پختونخواہ کے امیر مشتاق احمد خان نے سینٹ اورایم این اے مولانا عبدالاکبر چترالی نے قومی اسمبلی میں حج 2020,21 کے فارم میں ختم نبوت ﷺ کے کالم نکالنے کے حوالے سے تحریک التواء جمع اورقرارداد پیش کردی ہےجس میں کہا گیا ہے کہ اسلامیان پاکستان اس اہم مسئلے پر اضطراب کا شکارہیں اوریہ نظریاتی مملکت اسلامی جمہوری پاکستان عوام کیلئے لمحہ فکریہ ہے اور مقدس مقام پر جانے سے قبل اس طرح کے اقدامات انتہائی شرمناک ہیں، ختم نبوتﷺ تمام مسلمانوں کے بنیادی عقیدے کا اہم جزوہے اور حج بیت اللہ جیسے


جیسے مقدس زیارت کے سلسلہ میں فارم سے ختم نبوت کونکالنا دنیا کے تمام مسلمانوں کی دل آزادی ہے اوراسی طرح قادیانی گروپ،احمدی گروپ کو زمین حرم سے بازرکھنے کا واحد ذریعہ ختم نبوت کا حلف نامہ ہے۔ختم نبوت ﷺ کے کالم کو فوری طور پر حج فارم سال2020-21 میں شامل کرنے کیلئے اقدامات کیے جائیں لہذااس معاملے کو ہاؤس میں بحث کیلئے منظور کیا جائے اس طرح کی سازشیں کسی صورت کامیاب نہیں ہوگی یہ انتہائی خطرناک اقدام ہے جس سے کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔جماعت اسلامی حکومت سے مطالبہ کرتی ہے کہ سال 2018-19 ء کے حج فارم کو فی الفور بحال کرتے ہوئے ختم نبوت کا حلف نامہ اس میں درج کیاجائے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

ایک قیمتی سوال

چارلس ٹی میٹکلف  1785ءمیں کلکتہ میں پیدا ہوا تھا‘ والد ایسٹ انڈیا کمپنی میں ڈائریکٹر تھا اور کلکتہ میں تعینات تھا‘ چارلس نے لندن سے تعلیم حاصل کی اور 1801ءمیں واپس آ کر کمپنی کی نوکری کر لی‘ وہ بنگال کے گورنر جنرل لارڈ ویسلے کا پرائیویٹ سیکرٹری تھا‘ برطانیہ اس وقت نپولین بونا پارٹ سے لڑ رہا ....مزید پڑھئے‎

چارلس ٹی میٹکلف  1785ءمیں کلکتہ میں پیدا ہوا تھا‘ والد ایسٹ انڈیا کمپنی میں ڈائریکٹر تھا اور کلکتہ میں تعینات تھا‘ چارلس نے لندن سے تعلیم حاصل کی اور 1801ءمیں واپس آ کر کمپنی کی نوکری کر لی‘ وہ بنگال کے گورنر جنرل لارڈ ویسلے کا پرائیویٹ سیکرٹری تھا‘ برطانیہ اس وقت نپولین بونا پارٹ سے لڑ رہا ....مزید پڑھئے‎