مسلم لیگ ن کی خاتون رہنما فرزانہ بٹ کی جانب سے پولیس اہلکار کو تھپڑ مارنا مہنگا پڑ گیا 

  بدھ‬‮ 12 جون‬‮ 2019  |  19:03

لاہور(این این آئی)مسلم لیگ (ن) کی خاتون رہنما فرزانہ بٹ کی جانب سے پولیس اہلکار کو تھپڑ مارنا مہنگا پڑ گیا،تھانہ پرانی انار کلی پولیس نے مسلم لیگ (ن) کی رہنما فرزانہ بٹ سمیت 150 کارکنان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا۔ایف آئی آر کے متن میں کہا گیا ہے کہ لیگی مشتعل خاتون کارکن فرزانہ بٹ نے ہائیکورٹ میں ڈیوٹی پر مامور کانسٹیبل علی رضا کو تھپڑ مارا۔ہائی کورٹ کے باہر لیگی کارکنوں نے ایس آئی محمد اقبال اورکانسٹیبل راناعمار احمد کو سڑک پر تشدد کا نشانہ بنایا۔مقدمہ میں لیگی کارکنان وحید گل،یونس خان، احمد رشید،شیخ کبیر تاج سمیت 150کارکنان


کے خلاف کارسرکار میں مداخلت،پولیس پرتشدد اور دھمکیاں دینے کاالزام عائد ہے۔لیگی کارکنوں پر درج ہونے والے مقدمے میں دس سے زائد دفعات عائد کی گئی ہیں۔

موضوعات:

loading...