خون سفید ہو گیا، بیٹے نے جائیداد کی خاطر سگے باپ کو شوٹرز کی مدد سے مروا دیا

  جمعہ‬‮ 15 جنوری‬‮ 2021  |  19:19

لاہور( این این آئی ) بیٹے نے جائیداد کی خاطر باپ کی سپاری دے کر شوٹرز کی مدد سے مروا دیا ،سی آئی اے پولیس نے شوٹرز اور بیٹے کو گرفتار کر لیا۔تفصیلات کے مطابق چند ماہ قبل رمضان نامی تاجر کو چوہنگ میں واقع اس کے گھر میں ہی نامعلوم افراد نے اسے مار دیاتھا ۔ رمضان کے مارے جانے کا مقدمہ اس کے بیٹے عدنانکی مدعیت میں درج کیا گیا ۔ پولیس نے سی سی ٹی وی کی مدد حاصل کی تو عدنان کی حرکات مشکوک لگیں ۔ پولیس نے عدنان کو حراست میں لیا تو اس نے


پردہ فاش کر دیا ۔ابتدائی تفتیش کے مطابق عدنان نے دو شوٹرز کو 12لاکھ روپے پر رمضان کومارنے پر راضی کیا اور ان کو پانچ لاکھ ایڈوانس دیئے اور باقی رقم کام ہونے کے بعد ادا کی ۔ پولیس نے دونوں شوٹرز کو بھی گرفتار کر لیا ۔ سی آئی اے اقبال ٹائون کے مطابق ملزمان سے اسلحہ بھی برآمد کر لیا ۔ملزمان نے پینتیس ہزار روپے کا پستول خریدا تھا اور اس سے پہلے بھی رمضان کو مارنے کی کوشش کی لیکن کامیاب نہ ہو سکے۔ دوسری جانب لکی مروت شہر کے مصروف ترین فقیران بازار (مینا خیل)میں فائرنگ کے ایک واقعہ میں12سالہ لڑکا جاں بحق ہوگیا، فائرنگ سے ایک شخص زخمی بھی ہوا ہے ۔ اطلاعات کے مطابق پستول سے مسلح حملہ آور کی فائرنگ سے12سالہ راہگیر علی نواز موقع پر دم توڑ گیا جبکہ بلال زخمی ہوا ہے ۔ واردات کے بعد حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا، عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ اچانک فائرنگ سے شہریوں خاص کو دکانداروں میں بھگدڑ مچ گئی اور وہ خوف کے مارے دکانوں کی طرف دوڑ پڑے ۔اس کے علاوہ دیپالپور میں تین مختلف حادثات میں تین افراد ہلاک ہو گئے پہلے حادثہ میں چک کوٹ رادھا کشن کا محمد پرویز اپنی بیویسیلاں بی بی اور تین سالہ بیٹے ارسلان کے ہمراہ موٹرسائیکل پر جا رہا تھا کہ رینالہ خورد کے قریب ٹکر کر بیوی سیلاں بی بی اور تین سالہ بیٹے ارسلان ہلاک ہو گئے۔ دوسرے حادثہ میںدو موٹرسائیکلوں کی تصادم سے موٹرسائیکل سوار 13 سالہ لڑکا شاکی گر گیا اس دوران پیچھے سے آنے والی بس نے اس کو کچل کر ہلاک کر دیا۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

آخری موو

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎