پارٹی صدر کیساتھ وزیراعظم بھی ڈھونڈنا پڑ گیا، وزیراعظم شاہد خاقان بھی گئے۔۔نواز شریف کی نا اہلی کے بعدن لیگ پر ایک اور پہاڑ ٹوٹ پڑا

  جمعہ‬‮ 23 فروری‬‮ 2018  |  14:53

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) نواز شریف کی پارٹی صدارت سے نااہلی کے بعد اگر 28جولائی 2017کے بعدسے اب تک کے فیصلوں کو کالعدم قرار دیا جاتا ہے تو پھر ” اصلی“ وزیر اعظم بھی ” نقلی“ قرار پاتے ہیں، عمران خان دنیا کے تمام شوہروں پر بازی لے گئے ہیں باقی شوہر نکاح کے بعد ” رن مرید“ ہوتے ہیں جبکہ عمران خان نکاح سے پہلے ہی مرید ہو چکے تھے ،جمعیت علمائے اسلام (ف)کے سیکرٹری اطلاعات حافظ حسین احمد کی اٹک کے سینئر صحافی نثار علی خان سے گفتگو۔ تفصیلات کے مطابق جمعیت علمائےا سلام (ف)کے سیکرٹری اطلاعات حافظ حسین


احمد نے اٹک کے سینئر صحافی نثار علی خان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف کی پارٹی صدارت سے نااہلی کے بعد اگر 28جولائی 2017کے بعدسے اب تک کے فیصلوں کو کالعدم قرار دیا جاتا ہے تو پھر ” اصلی“ وزیر اعظم بھی ” نقلی“ قرار پاتے ہیں، عمران خان کے نکاح کی ہیٹرک کی طرح شاہد نواز شریف بھی نااہلی کی ہیٹرک کا ”اعزاز“ حاصل کر لیں ، عمران خان دنیا کے تمام شوہروں پر بازی لے گئے ہیں باقی شوہر نکاح کے بعد ” رن مرید“ ہوتے ہیں جبکہ عمران خان نکاح سے پہلے ہی مرید ہو چکے تھے ۔نواز شریف کا یہ بیانیہ کہ انہیں عدالت عظمیٰ کے فیصلوں سے عوامی پذیرائی حاصل ہوئی ہے تو پھر شریف خاندان کو ججز کے خلاف تحریک چلانے کی بجائے ان کا مشکور ہونا چاہئے ،ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے حافظ حسین احمد کا کہنا تھا کہ خطے کی روایات کے مطابق پہلے شوہر کے بعد بیوی، پھر بیٹی آتی ہے مگر باپ بیٹی عدالت سے نااہل ہو چکے ہیں اس لئے مریم نواز پارٹی صدر بننے کی اہل نہیں ہونگی جبکہ بیٹے پہلے ہی سیاسی نااہل ہیں، مغل شہنشاہوں کی مخالفت گھروں اور خاندان سے ہی شروع ہوئی تھی ، مریم نواز کی تصویروں پر کالک ملنے سمیت حمزہ شہباز کی مخالفت بھی مغلیہ دور کی یاد تازہ کرتی ہے۔

موضوعات:

loading...