چین میں کورونا کے مریضوں کے لیے مختص عمارت منہدم بڑے پیمانے پر ہلاکتیں ، کئی لاپتہ

  اتوار‬‮ 8 مارچ‬‮ 2020  |  16:19

بیجنگ(این این آئی)چین کے شہر کونزو میں کورونا وائرس کے مریضوں کے قرنطینہ کے لیے مختص ہوٹل کی عمارت زمین بوس ہونے سے کم از کم چھ افراد ہلاک ہو گئے ہیں جبکہ 28 افراد ابھی بھی لاپتہ ہیں۔جنوبی صوبہ فوجیان کے پانچ منزلہ شینجیا ہوٹل کی عمارت میں کل 71 افراد موجود تھے جن میں سے درجنوں افراد کو نکال لیا گیا ہے جبکہ ریسکیو کارکن ملبے میں

مزید لوگوں کو تلاش کر رہے ہیں۔اس بات کی ابھی تک نشاندہی نہیں ہو سکی کہ یہ عمارت کیوں گری۔ میڈیارپورٹس کے مطابق یہ واقعہ گزشتہ روز مقامی وقت کے مطابق شام سات بجکر 30 منٹ پر پیش آیا۔ اس عمارت کو کورونا وائرس کے مریضوں سے رابطے میں رہنے والے افراد کی مانیٹرنگ کی غرض سے قرنطینہ کی سہولت کے لیے استعمال کیا جارہا تھا۔‎



موضوعات:

زیرو پوائنٹ

پاکستان کا المیہ کیا ہے؟

میں نے ہرمینس (Hermanus) کا ذکر کیا تھا‘ یہ شہر کیپ ٹائون سے 115 کلومیٹر کے فاصلے پر سمندر کے کنارے آباد ہے‘ اسے ڈچ کسان ہرمینس پیٹرز نے 1805ء میں آباد کیا تھا‘آج بھی اس کی 80فیصد آبادی گوروں پر مشتمل ہے‘ ہرمینس وہیل مچھلیوں کی وجہ سے پوری دنیا میں مشہور ہے‘ اکتوبر میں روس میں سردیاں شروع ....مزید پڑھئے‎

میں نے ہرمینس (Hermanus) کا ذکر کیا تھا‘ یہ شہر کیپ ٹائون سے 115 کلومیٹر کے فاصلے پر سمندر کے کنارے آباد ہے‘ اسے ڈچ کسان ہرمینس پیٹرز نے 1805ء میں آباد کیا تھا‘آج بھی اس کی 80فیصد آبادی گوروں پر مشتمل ہے‘ ہرمینس وہیل مچھلیوں کی وجہ سے پوری دنیا میں مشہور ہے‘ اکتوبر میں روس میں سردیاں شروع ....مزید پڑھئے‎