لاہور سیالکوٹ موٹروے پرآج کل کیاہورہاہے؟ تعیناتی کے باوجودپولیس اہلکار بھی کچھ نہ بگاڑ سکے

  پیر‬‮ 21 ستمبر‬‮ 2020  |  17:22

لاہور (آن لائن) لاہور سیالکوٹ موٹروے سانحہ کی بعد پولیس نفری تعینات کرنے کے باوجود مذکورہ روڈ پر موٹر سائیکلوں کی آمد و رفت عروج پر پہنچ گئی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ پنجاب حکومت نے اس موٹروے پر موٹرسائیکل سواروں کی آمد و رفت پرپابندی عائد کر رکھی ہے لیکن اس کے باوجود کرول گائوں کے مختلف رہائشی نہ صرف تنہا بلکہ اپنے فیملیوں کے ساتھ خفیہ راستوں سے موٹر وے پر آکر موٹر سائیکلیں چلا رہے ہیں جس سے اسی موٹروے پر کوئی بڑا حادثہ رونما بھی ہوسکتا



موضوعات:

زیرو پوائنٹ

مولانا روم کے تین دروازے

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎