کورونا وائرس سے درباروں اور مزاروں کی بندش، محکمہ اوقاف کو کروڑوں کا خسارہ

  بدھ‬‮ 15 جولائی‬‮ 2020  |  0:23

لاہور (آن لائن) صوبائی دارالحکومت لاہور میں کرونا وائرس کے پیش نظر لائے گئے لاک ڈائون کے ایس او پیز کے تحت گزشتہ 5 ماہ سے لاہور سمیت صوبے بھر کے دربار اور مزارات کی بندش کے باعث محکمہ اوقاف کو 35 کروڑ روپے کے خسارے کا سامنا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ درباروں اور مزارات کا بنیادی ذرائع آمدن درباروں اور مزارات میں پڑا غلہ ہے جس میں ان مقامات پر آنے والے زائرین سال بھر نظرانہ ڈالتے رہتے ہیں لیکن مزارات اور درباروں کی مسلسل بندش کے باعث زائرین کا داخلہ بند رکھا گیا جبکہ ان درباروں اور


مزاراتپر مختلف ٹھیکہ جات جاری نہ ہونے کے باعث محکمہ اوقاف پنجاب کی آمدن میں اچھی خاصی کمی واقع ہوگئی اور اس کمی کے باعث محکمہ اوقاف کے لئے اپنے معاملات کو چلانا انتہائی مشکل ہوگیا۔ یہ بھی بتایا گیا ہے کہ محکمہ اوقاف پنجاب نے محکمہ مالی بحران سے نمٹنے کے لئے تمام چھوٹے بڑے درباروں اور مزارات پر حفاظت پاپوش سمیت دیگر امور کے ٹھیکے کم لاگت پر دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ صرف داتا دربار کے مزار پر حفاظت پاپوش کے ٹھیکے کی مد میں محکمہ کو دو کروڑ روپے کے نقصان کا سامنا کرنا پڑے گا۔


موضوعات: