عسکری فلیٹس میں 3 بچوں کو قتل کرنے والی خاتون انیقہ گزر اوقات کیلئے کیا کام کرتی تھی ؟ دنگ کر دینے والے انکشافات سامنے آگئے

  اتوار‬‮ 25 مارچ‬‮ 2018  |  9:01

لاہور (نیو زڈیسک)بیدیاں روڈ پر 3کم سن بہن بھائیوں کے قتل کا معمہ حل، قاتل ماں نکلی۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان کے صوبے پنجاب کے صوبائی دارالحکومت لاہور میں آج صبح تہرے قتل کی لرزہ خیز واردات نے سب کو دہلا کر رکھ دیا تھا۔ بیدیاں روڈ پر واقع ایک رہائشی کالونی میں 3کم سن بہن بھائیوں کو گھر میں گھس کر بیدردی سے قتل کر دیا گیا تھا۔ پولیس نے تہرے قتل کی اس واردات کا سراغ لگا لیا ہے اور قاتل بچوں کی والدہ نکلی ہے۔ پولیس کے مطابق واقعے کی اطلاع ملنے پر جب پولیس ٹیم وہاں پہنچی


تو گھر میں 3 بچوں کی لاشیں موجود تھیں جبکہ ان کی والدہ بھی زخمی تھیں اور ان کی کلائی پر زخم کا نشان موجود تھا۔پولیس کے مطابق بچوں کی والدہ نے تہرے قتل کا الزام اپنے ایک دوست پر عائد کیا۔ ذرائع کے مطابق خاتون نشہ کی عادی لگتی ہے اور ایک شخص کا گزشتہ کچھ عرصہ سے ا کے گھر آنا جانا تھا ۔ تصاویر میں بھی دیکھا جا سکتا ہے کہ خاتون نے اپنی کلائی کو کاٹا ہوا ہے۔ خاتون اس شخص سے شادی کی خواہاں تھی بڑے کام کا سیاسی تجزیہ سامنے آ گیا،تاہم واقعہ کی تحقیقات جاری ہیں ۔ پولیس کے مطابق جائے وقوعہ پر تین بچے مردہ حالت میں پڑے تھے اور بچوں کی والدہ انیقہ قریب ہی صوفے پر نیم بے ہوشی کی حالت میں بیٹھی تھی اور اس کے بازوؤں اور گردن پر تیز دھار آلہ سے زخم لگے ہوئے تھے۔ پولیس نے بچوں کی والدہ سے بوچھ گچھ کی تو انیقہ بی بی نے بتایا کہ اس کی ایک کار ڈیلر حسنین مصطفی کے ساتھ شناسائی تھی اوراس کامیرے گھر آنا جانا ہےاور اسی نے بچوں کو موت کے گھاٹ اتارا ہے اور جب میں نے مبینہ قاتل کا پیچھا کیا تو اس کی گاڑی کا ایکسیڈنٹ ہو گیا۔پولیس کے مطابق انیقہ لیپ ٹاپ کا بزنس کرتی تھی اور بچوں کے ہمراہ اکیلی کرائے کے فلیٹ میں رہائش پذیر تھی۔ ایس پی کینٹ بلال ظفر کے مطابق خاتون ذہنی مریضہ لگتی ہے جبکہ بچوں کے والد قیصر امین نے الزام لگایا ہے کہ اس کے تینوں بچوں کو اس کی سابقہ بیوی اور اس کے آشنا نے قتل کیا ہے۔ جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے بھی واقع کا نوٹس لیتے ہوئے پولیس کوقاتل کی فی الفور گرفتاری کا حکم جاری کیا تھا۔

موضوعات:

loading...