پی ڈی ایم سٹیرنگ کمیٹی کااجلاس ممبر نہ ہونے کے باوجود مریم نواز اجلاس میں کیوں پہنچ گئیں؟ ن لیگی رہنما نے خود ہی بتا دیا

  پیر‬‮ 18 جنوری‬‮ 2021  |  10:16

اسلام آباد،لاہور (این این آئی)پاکستان مسلم لیگ(ن) کی نائب صدر مریم نواز نے اسٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس کے حوالے سے کہا ہے کہ مجھے اجلاس میں شرکت کی خصوصی طور پر دعوت دی گئی ،بلاول کمیٹی کے ممبر نہیں ہیں اس لیے وہ شریک نہیں ہوئے۔پیر کو پاکستان ڈیموکریٹموومنٹ کی اسٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس میں شرکت کیلئے مریم نواز مولانا فضل الرحمان کے گھر پہنچیں تومولانا اسعد محمود، مفتی ابرار احمد نے استقبال کیا۔اس موقع پر صحافی نے سوال کیا کہ پی ڈی ایم سست ہوتی کیوں دیکھائی دے رہی ہے تو اس پر مریم نواز نے کہا کہ کیا


حکومت تیز ہو رہی ہے۔بلاول بھٹو کے اجلاس میں شریک نہ ہونے کے حوالے سے سوال پر مریم نواز نے کہا کہ بلاول اسٹیئرنگ کمیٹی کے ممبر نہیں ہیں اس لیے وہ نہیں آئے۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس کی خصوصی طور پر دعوت دی گئی ۔دوسری جانب اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم کے الیکشن کمیشن کے باہر ممکنہ احتجاج کو ہائیکورٹ میں چیلنج کردیا گیا۔اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی جس میںموقف اپنایا گیا کہ اپوزیشن کا الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج دبا ڈالنے کے لیے ہے۔ادارے قانون کے مطابق چلتے ہیں، دبا ئونہیں ڈالا جاسکتا، اپوزیشن کا احتجاج الیکشن کمیشن کے کام میں مداخلت ہے۔قانون اس طرح کے احتجاج کی اجازت نہیں دیتا، استدعا ہے کہ پی ڈی ایم کے احتجاج کو روکنے کا حکم دیا جائے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

آخری موو

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎