نیب نے نواز شریف کو لندن بھیجا نہیں تو واپس کیوں لائے؟ نیب نے نوازشریف کی وطن واپسی کے معاملے سے لاتعلقی اختیار کرلی

  اتوار‬‮ 23 اگست‬‮ 2020  |  12:18

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)نیب نے سابق وزیر اعظم نوازشریف کی وطن واپسی کے معاملے سے لاتعلقی اختیار کرلی اور موقف اختیار کیا ہے کہ نیب نے نواز شریف کو لندن بھیجا نہیں تو واپس کیوں لائے؟جیو نیوز کے مطابق نیب ذرائع نے کہا ہے کہ نوازشریف وفاقی حکومت کی اجازت سے بیرون ملک گئے تھے اور واپسی کیلئے وزارت داخلہ ہی برطانوی حکومت اور انٹرپول کو خط لکھے۔نیب ذرائع کے مطابق نوازشریف کو عدالتی حکم پر نیب نے نہیںوفاقی حکومت نے بیرون ملک جانے کی اجازت دی۔ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت نوازشریف کو وطن واپس لانے کا فیصلہ کر چکی ہے


اور آئندہ ہفتے نواز شریف کی وطن واپسی کے لیے کارروائی کا آغاز کرے گی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف کی عدم واپسی کی صورت میں شہباز شریف ان کے ضمانتی بھی ہیں۔گزشتہ روز مشیر احتساب و داخلہ شہزاد اکبر نے بھی کہا تھا کہ شہبازشریف ، نوازشریف کے ضمانتی بنے تھے اس لئے وہ انہیں واپس لائیں ۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

کارٹرفارمولا

جمی کارٹر امریکا کے 39ویں صدر تھے‘ یہ 1977ءسے 1981ءتک دنیا کی سپر پاور کے سربراہ رہے‘ یہ 1924ءمیں جارجیا کے چھوٹے سے گاﺅں پلینز میں پیدا ہوئے ‘ زمین دار فیملی کے ساتھ تعلق تھا‘ والد مونگ پھلی اگاتے تھے‘ جوانی میں نیوی جوائن کر لی‘ والد کے انتقال کے بعد کھیتی باڑی شروع کر دی‘یہ بھی ....مزید پڑھئے‎

جمی کارٹر امریکا کے 39ویں صدر تھے‘ یہ 1977ءسے 1981ءتک دنیا کی سپر پاور کے سربراہ رہے‘ یہ 1924ءمیں جارجیا کے چھوٹے سے گاﺅں پلینز میں پیدا ہوئے ‘ زمین دار فیملی کے ساتھ تعلق تھا‘ والد مونگ پھلی اگاتے تھے‘ جوانی میں نیوی جوائن کر لی‘ والد کے انتقال کے بعد کھیتی باڑی شروع کر دی‘یہ بھی ....مزید پڑھئے‎