بابا نے جیب سے تھیلی نکال کر گلاس میں کچھ ملایا، ابو نے ہمیں بھی جوس پلایا تھا جس سے الٹیاں شروع ہو گئیں، خود کشی کرنے والے شخص کی بیوی اور آٹھ سالہ بیٹی کا افسوسناک بیان سامنے آ گیا

  جمعرات‬‮ 23 جنوری‬‮ 2020  |  23:52

کراچی (این این آئی) شہر قائد کے علاقے دہلی کالونی میں زہریلا مشروب پی کر خود کشی کرنے والے شخص کی بیوی اور آٹھ سالہ بیٹی کا بیان سامنے آ گیا۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز کراچی کے علاقے دہلی کالونی میں زہریلا مشروب پینے اور اپنے بچوں کو پلانے والے شخص ریحان کی بیوہ اور بیٹی نے پولیس کو اپنا بیان ریکارڈ کرا دیا ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ ریحان کی بیوہ نے بھی واقعے کو خود کشی قرار دیا ہے،بیوہ نے بیان دیا کہ ریحان نے زہریلا مشروب خود پیا اور بچوں کو بھی پلایا، وہ سنار کا کام


کرتا تھا اور لوگوں کا قرض دار ہو گیا تھا، قرضے کی ادائیگی سے ہر وقت پریشان رہتا تھا۔واقعے کے بعد پولیس نے کہا تھا کہ جاں بحق نوجوان ریحان نے خود کشی کی، بچوں کو بھی زہریلا مشروب پلا کر مارنے کی کوشش کی، واقعے میں متاثرہ ریحان کی 8 سال کی بیٹی منزہ کا بیان بھی قلم بند کیا جا چکا ہے، بچی نے بیان دیا کہ بابا نے جیب سے تھیلی نکال کر گلاس میں کچھ ملایا، بابا نے شربت مجھے اور چھوٹے بھائی کو بھی پینے کے لیے دے دیا، بابا نے خود شربت کے 3 گلاس پیے، مجھے اور بھائی کو ایک گھونٹ پر ہی شربت بد ذائقہ لگا۔پولیس کے مطابق واقعے میں ریحان تو مر گیا تاہم اس کی بیٹی اور بیٹا بچ گئے ہیں جو این آئی سی ایچ میں زیر علاج ہیں، متاثرہ بچی منزہ کی حالت اب پہلے سے بہتر ہے۔ متوفی ریحان کرائے کے مکان میں مقیم تھا، اور بھائی کی دکان پر ملازمت کرتا تھا، اپنے تفصیلی بیان میں ریحان کی بیوہ نے کہا میں واش روم میں تھی، ریحان نے کہا تھا تم واش روم سے ہو کر آ مجھے تم سے کام ہے، جب اچانک بیٹی کے چلانے کی آوازیں آئیں، بیٹی نے کہا ابو نے کچھ پی لیا ہے وہ بے ہوش ہو گئے ہیں، میں اندر بھاگ کر گئی تو ریحان زمین پر بے ہوش پڑا تھا، بیٹی نے کہا ابو نے ہمیں بھی جوس پلایا تھا، بیٹی کو بھی الٹیاں شروع ہو گئی تھیں، بیٹے کے منہ سے بھی خون آنے لگا۔

موضوعات: