ایران نے عراق، شام اور یمن کو تباہ کرنے پر18 ارب ڈالر لگا دئیے،امریکی محکمہ خارجہ

  جمعرات‬‮ 11 اکتوبر‬‮ 2018  |  11:15

واشنگٹن(انٹرنیشنل ڈیسک)امریکی محکمہ خارجہ نے اپنی ایک رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ ایران نے گزشتہ آٹھ برسوں کے دوران عراق، شام اور یمن میں دہشت گردی کی سپورٹ پر 18 ارب ڈالر سے زیادہ خرچ کر ڈالے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اس رپورٹ کو امریکی محکمہ خارجہ میں ایران کے لیے مختص ایک ورکنگ گروپ نے تیار کیا۔ رپورٹ کے مطابق تہران نے القدس فورس کے ذریعے ان رقوم کو مختلف طریقوں سے اْن ملیشیاؤں اور جماعتوں تک منتقل کیا جو اس کی طرف سے خطّے میں لڑ رہی ہیں۔رپورٹ میں خطّے میں ایرانی نظام کے تباہ کر رویّے

کی تفصیلات شامل ہیں۔ اس واسطے ایران نے دہشتگردی اور میزائل پروگرام کی فنڈنگ اور سپورٹ کی، خود پر عائد پابندیوں کو چکمے دئیے، سمندری اور سکیورٹی دھمکیاں جاری رکھیں اور انسانی حقوق کی پامالی کی۔رپورٹ میں یہ بھی بتایا گیا کہ ایران نے القاعدہ تنظیم کے ارکان کو پناہ دینے اور ان کی آمد و رفت کو محفوظ بنانے کا سلسلہ جاری رکھا۔ اس کے نتیجے میں تنظیم جنگجوؤں اور مالی رقوم کو شام اور جنوبی ایشیا کے علاقوں میں منتقل کرنے میں کامیاب رہی۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں