نواز شریف کی خواہش ہے پاک فوج پنجاب پولیس، آئی ایس آئی سپیشل برانچ بن جائے،تہلکہ خیز دعویٰ

  جمعرات‬‮ 24 ستمبر‬‮ 2020  |  23:14

اسلام آباد(این این آئی) پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما و سابق وفاقی وزیر ہمایوں اخترخان نے کہا ہے کہ ایک عام خیال یہ ہے کہ نواز شریف کو تب خوشی ہو گی جب پاکستان کی فوج پنجاب پولیس اور آئی ایس آئی سپیشل برانچ بن جائے لیکن ایسا کبھی نہیں ہوگا، اے پی سی میں اپوزیشن نے عوام کی بجائے اپنے مسائل پر گفتگو کی،مسلم لیگ(ن) میں واضح اختلافات موجود ہیں اورآنے والے دن حکومت کیلئے نہیں بلکہ مسلم لیگ(ن) کیلئے بڑے اہم ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایک تقریب میں خطاب اورصحافیوں سے گفتگوکرتے ہوئے


کیا۔ ہمایوں اخترخان نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) او رپیپلز پارٹی وفاق میں اقتدار کی کئی باریاں لے چکی ہیں، اسی طرح پیپلزپارٹی سندھ میں چھ بار اور مسلم لیگ (ن) پنجاب میں پانچ باراقتدارمیں آئی، کیا انہوں نے قوم کو بتایا ہے کہ وہ دوبارہ اقتدارمیں آکر ایسا کیا کریں گی کہ پاکستان ملائیشیاء،ترکی اور جنوبی کوریا بن جائے گا، اپوزیشن جماعتوں کی اقتدارمیں آنے کی تڑپ عوام کے کیلئے نہیں بلکہ اپنے مسائل کے حل کیلئے ہے۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ حکومت سوچی سمجھی سازش کے تحتملک کو اس نہج پرپہنچا کر گئی جہاں سے واپسی نا ممکن تھی لیکن وزیر اعظم عمران خان نے اپنے عزم سے ملک کی ڈوبتی کشتی کوسنبھالا دیا اور انشا اللہ اسے کنارے بھی لگائیں گے۔ اپوزیشن کے منفی پراپیگنڈے کے باوجود آج ہماری برآمدات بڑھ ہیں، ترسیلات زر میں اضافہ ہوا ہے، کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ ختم ہوا ہے اور معاشی اشاریے مستقبل کی بہتری کی پیشگوئی کر رہے ہیں البتہ اپوزیشن کا مستقبل تاریک ہے اور یہی ان کی بے چینی کی اصل وجہ ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے ملک کودرست میں گامزن کرنے کیلئے جو مشکل فیصلے کئے ان کے ثمرات سامنے آنا شروع ہو گئے ہیں۔ اے پی سی میں اپوزیشن نے عوام کی بجائے اپنے مسائل پر گفتگو کی


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

صرف تین ہزار روپے میں

دنیا میں جہاں بھی اردو پڑھی جاتی ہے وہاں لوگ مختار مسعود کو جانتے ہیں‘ مختار مسعود بیورو کریٹ تھے‘ ملک کے اعلیٰ ترین عہدوں پر رہے‘ لاہور کا مینار پاکستان ان کی نگرانی میں بنا‘ یہ اس وقت لاہور کے ڈپٹی کمشنر تھے‘ چارکتابیںلکھیںاور کمال کر دیا‘ یہ کتابیں صرف کتابیں نہیں ہیں‘ یہ تاریخ‘ جغرافیہ اور پاکستان کے ....مزید پڑھئے‎

دنیا میں جہاں بھی اردو پڑھی جاتی ہے وہاں لوگ مختار مسعود کو جانتے ہیں‘ مختار مسعود بیورو کریٹ تھے‘ ملک کے اعلیٰ ترین عہدوں پر رہے‘ لاہور کا مینار پاکستان ان کی نگرانی میں بنا‘ یہ اس وقت لاہور کے ڈپٹی کمشنر تھے‘ چارکتابیںلکھیںاور کمال کر دیا‘ یہ کتابیں صرف کتابیں نہیں ہیں‘ یہ تاریخ‘ جغرافیہ اور پاکستان کے ....مزید پڑھئے‎