جسے اللہ رکھے اسے کون چکھے، کراچی طیارہ حادثہ میں معجزانہ طور پر متعدد مسافر محفوظ رہے، کراچی ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ

  جمعہ‬‮ 22 مئی‬‮‬‮ 2020  |  18:58

کراچی (آن لائن) کراچی طیارہ حادثے میں بعض مسافر معجزانہ طورپر محفوظ رہے، بینک آف پنجاب کے صدر ظفرمسعود بھی محفوظ رہے ہیں انہیں زخمی حالت میں سی ایم ایچ ملیر منتقل کردیا گیا ہے۔جبکہ دیگر زخمیوں کو بھی قریبی اسپتالوں میں منتقل کردیا گیا ہے۔ پی آئی اے کے طیارے میں 90 مسافر اور 8 عملے کے افراد موجود تھے۔پی آئی اے کے ترجمان عبد الستار کے مطابق پی آئی اے کی پرواز 8303 لاہور سے 90 مسافروں اور 8 عملے کے لوگوں کو لے کر کراچی آرہی تھی۔طیارے کا رابطہ 2 بجکر 37 منٹ پر منقطع ہوا تھا، طیارے


میں نجی ٹی وی چینل 24 نیوز کے ڈائریکٹر پروگرامنگ انصار نقوی بھی موجود تھے، اس کے علاوہ بینک آف پنجاب کے صدر ظفر مسعود بھی طیارے میں موجود تھے۔سندھ حکومت نے کراچی کے تمام بڑے اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی ہے۔یہ ایمرجنسی کراچی ایئرپورٹ کے قریب ماڈل کالونی میں طیارہ حادثہ کے بعد نافذکی گئی ہے۔سندھ کی وزارت صحت کی میڈیا کو آرڈینیٹر میران یوسف کے مطابق وزارت صحت نے کراچی کے تمام بڑے ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی ہے۔


موضوعات: