72 سالہ وزیر صحت پنجاب یاسمین راشد شب و روز بے لوث خدمات کی فہرست میں سب سے آگے ہیں، سندھ کی وزیر صحت سب سے پیچھے مکمل غائب، معروف صحافی نے روزانہ کی کارکردگی کی بنیاد پر حیرت انگیز بات کر دی

  ہفتہ‬‮ 18 اپریل‬‮ 2020  |  21:13

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) معروف صحافی کامران خان نے اپنے ایک ٹوئٹ میں کہا کہ کرونا کے دوران حکومتی شخصیت کی کارکردگی روزانہ بنیاد پر جانچنے پر سمجھتا ہوں کہ 72 سالہ وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد شب و روز بے لوث خدمات کی فہرست میں سب سے آگے ہیں،سندھ کی وزیر صحت سب سے پیچھے مکمل غائب ہیں، حدیں تمام ہو گئیں ڈاکٹر عذرا نہ عوام نہ مراد علی شاہ کے ساتھ نظر آئیں۔ اس کے علاوہ معروف صحافی نے ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بھی سندھ کی صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر عذرا پیچوہو پر


تنقید کرتے ہوئے کہاتھاکہ جب تک کرونا وائرس کی وبا پھیلی ہے ڈاکٹر عذرا پیچوہو فیلڈ میں کہیں کام کرتی نظر نہیں آئیں جبکہ 72 سالہ پنجاب کے وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد شب و روز بے لوث عوام کی خدمت کرتی نظر آئیں۔انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر عذرا پیچوہو کی ذمہ داری تھی کہ وہ میڈیا کو روزانہ نہ سہی ہر دوسرے دن میڈیا کو کرونا وائرس پر اعتماد میں لیتی جبکہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے بعد ڈاکٹر عذرا پیچوہو منظرنامے سے مکمل غائب ہیں اور یہ بات سندھ کے عوام اور سیاسی حلقوں کے لیے قابل تشویش ہے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

آخری موو

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎