برطانیہ کے اخبار ڈیلی میل نے میاں شہباز شریف کی فیملی پر ڈیفڈ کی امداد منی لانڈر کرنے کا الزام لگا دیا‘ یہ الزام لگادیا،کس حد تک (درست) ہے؟کیا حکومت واقعی شہبازشریف کے اثاثے ضبط کرے گی؟ جاوید چودھری کا تجزیہ

  پیر‬‮ 15 جولائی‬‮ 2019  |  21:52

حکومت نے پچھلے مہینے (سہیل) ظفر چیمہ نام کے ایک شخص کو ٹورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن کا چیئرمین بنا دیا‘ یہ چیئرمین بننے کے بعد اپنے آبائی شہر گوجرانوالہ پہنچے تو ان کے زائرین نے ان پر ڈالرز‘ ریال‘ یوروز اور پاکستانی روپوں کی بارش کر دی‘ میں نے یہ منظر دیکھا تو مجھے وزیراعظم کا وہ اعلان یاد آ گیا جس میں انہوں نے کہا تھا‘ ہماری حکومت آئے گی تو ملک میں ڈالرز کی بارش ہو گی‘ عمران خان پر تو ڈالرز کی بارش نہ ہو سکی لیکن (سہیل) ظفر چیمہ پر بارش ہو گئی‘ میرا مشورہ ہے وزیراعظم انہیں


چند دن کے لیے وزیراعظم بنا دیں شاید ان کی وجہ سے ڈالروں کا سیلاب آ جائے کیونکہ یہ وزیراعظم کے مقابلے میں زیادہ خوش نصیب ہو رہا ہے‘ برطانیہ کے اخبار ڈیلی میل نے میاں شہباز شریف کی فیملی پر ڈیفڈ کی امداد منی لانڈر کرنے کا الزام لگا دیا‘ یہ الزام اس وقت حکومت اور اپوزیشن کے درمیان فٹ بال بن چکا ہے اور نوبت لندن میں مقدموں تک پہنچ گئی ہے‘ یہ الزام کس حد تک درست ہے اور شہزاد اکبر اور فواد چودھری کے مشورے نیب نے مان لیے چناں چہ مارکیٹ میں ذرائع سے ایک خبر گردش کر رہی ہے‘ نیب نے شہباز شریف کی رہائش گاہ 96 ماڈل ٹاؤن‘ ڈونگہ گلی کاگھیر اور قیمتی گاڑیاں منجمد کرنے کا فیصلہ کر لیا‘ کیا حکومت واقعی یہ اثاثے ضبط کرے گی؟

موضوعات:

loading...