دوسروں میں کوروناپھیلنے کا خدشہ، وائرس میں مبتلا34سالہ نرس نے خود کشی کرلی

  بدھ‬‮ 25 مارچ‬‮ 2020  |  16:55

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)کرونا وائرس کا شکار ہونے کے بعد اٹلی میں 34 سالہ نرس نے خودکشی کر لی۔تفصیلات کے مطابق ایک نرسنگ فیڈریشن نے انکشاف کیا ہے کہ ایک اطالوی نرس نے کورونا وائرس کا مثبت ٹیسٹ آنے کے بعد اس خوف کی وجہ سے خودکشی کر لی کہ وہ تک اس وائرس سے دوسروں کو بھی متاثر کرچکی ہے۔34 سالہ ڈینیئلا ٹریزی اٹلی میں کورونا وائرس سے بدترین متاثرہ علاقے لومبارڈے کے ایک ہسپتالکورونا وائرس کے خلاف جنگ میں پیش پیش تھی اور دیگرطبی عملے کے ساتھ فرنٹ لائن پر مریضوں کا علاج کر رہی تھی۔اٹلی کی نیشنل فیڈریشن


آف نرسز نے ان کی موت کی تصدیق گزشتہ رات کی اور نرس کے انتقال پر درد اور مایوسی کا اظہار کیا۔فیڈریشن نے کہا کہ نرس شدید دباؤ میں تھی کیونکہ انہیں خدشہ تھا کہ وہ کورونا وائرس کو قابو میں کرنے کی کوشش کرتے ہوئے دراصل وائرس پھیلانے کا سبب بن رہی ہے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

6درخواستیں

اتاترک جدید ترکی کے بانی ہیں‘ ان کا شمار دنیا کے دس بڑے لیڈروں میں ہوتا تھا‘ والد ایک چھوٹے سے سوداگر تھے لیکن اتاترک فوج میں بھرتی ہو گئے‘ مصطفی کمال پاشا میں دو ایسی خوبیاں تھیں جو اللہ تعالیٰ بہت کم لوگوں کو نصیب کرتا ہے‘ یہ بے انتہا بہادر انسان اور دوسرا اللہ تعالیٰ نے انہیں انتہائی ....مزید پڑھئے‎

اتاترک جدید ترکی کے بانی ہیں‘ ان کا شمار دنیا کے دس بڑے لیڈروں میں ہوتا تھا‘ والد ایک چھوٹے سے سوداگر تھے لیکن اتاترک فوج میں بھرتی ہو گئے‘ مصطفی کمال پاشا میں دو ایسی خوبیاں تھیں جو اللہ تعالیٰ بہت کم لوگوں کو نصیب کرتا ہے‘ یہ بے انتہا بہادر انسان اور دوسرا اللہ تعالیٰ نے انہیں انتہائی ....مزید پڑھئے‎