انوکھی بیماری میں مبتلا : بھیڑئیے جیسے چہرے والا بھارتی بچہ کون ہے؟

  پیر‬‮ 11 فروری‬‮ 2019  |  13:55
نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کی ریاست مدھیہ پردیش میں ایک ایسے بچے کا انکشاف ہواہے اس طرح عجیب الخلقت ہے کہ اس کا تمام چہرہ کسی بکری یا بھیڑ کی طرح بالوں سے ڈھکا ہواہے ۔جیوز نیوز کے مطابق اصل میں مدھیہ پردیش کے علاقے رتلام سے تعلق رکھنے والا 13 سالہ للت پٹیدار پیدائشی طور پر ایک عجیب و غریب بیماری کاشکارہے جو بھی اس کاپہلی مرتبہ دیکھتا ہے۔ وہ ڈر جاتاہے لیکن جو لوگ اسے جانتے ہیں وہ اب اس بچے سے اس قدر مانوس ہو چکے ہیں کہ اب انہیں نہ تو انہیں للت سے ڈر لگتا ہے اور نہ ہی عجیب محسوس ہوتاہے ۔ڈاکٹروں کا کہناہے کہ للت ہائپر ٹریکوسس نامی بیماری کے ساتھ پیدا ہوا جسے’ ’ویروولف سینڈروم‘ ‘بھی کہا جاتا ہے۔اس بیماری میں ملوث افراد کے چہرے سمیت پورے جسم پر 5 سینٹی میٹر تک لمبے بال نکلتے آتے ہیں، یہ عجیب الخلقت بچہ للت اپنے سکول اور علاقے کے دوستوں میں بہت مشہور ہو چکا ہے اور اس کے ساتذہ کا کہناہے کہ للت پڑھائی میں اچھا لیکن شرارتی بھی ہے ۔للت کا کہنا ہے کہ اس کے دوست بہت اچھے ہیں اور وہ اپنے دوستوں کے ساتھ خوب کھیلتا ہے لیکن کبھی کبھار اجنبی لوگ مجھے دیکھ کر پتھر مارتے ہیں اور بندر بھی کہا جاتا ہے ، ا س نے کہا کہ کبھی کبھار میں سوچتا ہوں کہ کاش میں بھی دوسرے بچوں کی طرح ہوتا لیکن اس حوالے سے کچھ کرنے کے قابل نہیں ہوں، اب میں خود کو اس صورت حال کا عادی بنا چکا ہوں اور میں خود سے مطمئن ہوں کیونکہ چہرے پر بڑے بالوں کی وجہ سے ہی میں دوسروں سے الگ نظر آتا ہوں۔للت کی والدہ کا کہنا ہے کہ میرا بیٹا 5 بہنوں کا کلوتابھائی ہے اوربہت سی دعاؤں کے بعد پیداہواہے ، اس لئے ہی میرے لئے بہت ہی اہم ہے ۔بہنیں للت کے چہرے کے بالوں کے ساتھ کھیل رہی ہیں۔للت گراؤنڈ میں اپنے دوستوں کے ساتھ کھیل رہا ہے۔

موضوعات:

loading...