صنعت کاروں اور تاجروں کو زیادہ سے زیادہ سہولتیں بہم پہنچانے کیلئے بزنس پلان تیار کرلیا ، شجاعت عظیم

  جمعہ‬‮ 10 اپریل‬‮ 2015  |  12:53

فیصل آباد(نیوز ڈیسک) وزیراعظم کے خصوصی مشیر برائے شہری ہوا بازی نے کہا ہے کہ وزیراعظم کی ہدایت پر صنعتکاروں اور تاجروں کے زیادہ سے زیادہ ہوائی جہاز کے ذریعے زیادہ سے زیادہ سہولتیں بہم پہنچانے کیلئے ایک بزنس پلان تیار کیا گیا ہے جس کے تحت پی آئی اے میں کم از کم پچاس نئے طیارے کی کھیپ شامل کی جارہی ہے ابتدائی طور پر تین طیارے حاصل کرلئے گئے ہیں جبکہ آئندہ دو ماہ میں مزید پندرہ طیارے اس بزنس پلان کے تحت شامل کئے جائینگے ۔مشیر ہوا بازی یہ بات فیصل آباد میں آن لائن


سے گفتگو کرتے ہوئے بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ پی آئی اے کے خسارے بتدریج کم کیاجارہا ہے جو گزشتہ سال 42ارب تھا جو اب کم ہوکر 17ارب روپے ہوچکا ہے اور انشاءاللہ جلد ہی اس خسارے کو بھی پورا کرلیا جائے گا ۔ مشیر ہوا بازی نے کہا کہ فیصل آباد سے نوے روز میں انٹرنیشنل پروازیں شروع کرنے کا منصوبہ تیار کرلیا گیا ہے جبکہ تیسرے بڑے شہر فیصل آباد کے ائرپورٹ کو بھی اپ گریڈ کرنے کا حکم دیا ہے جو صنعتکاروں کا مطالبہ تھا اور اس کی توسیع کا کام ہنگامی بنیادوں پر شروع کیا جاچکا ہے اور یہ کام نوے دن کے اندر مکمل ہوجائے گا ۔ قبل ازیں مشیر ہوا بازی شجاعت عظیم نے ائرپورٹ کا معائنہ کرنے کے علاوہ ایک بریفنگ میں بھی شرکت کی جس میں پارلیمانی سیکرٹری برائے خزانہ رانا محمد افضل ایم این اے ، صدر ایوان صنعت و تجارت انجینئر رضوان اشرف ، سابق صدر میاں جاوید اقبال اور دیگر صنعتکار اور سول ایوی ایشن اتھارٹی کے افسران بھی موجود تھے ۔(ر اش د)


زیرو پوائنٹ

راﺅنڈ اباﺅٹ

اندر کمار گجرال بھارت کے 12 ویں وزیراعظم تھے‘ یہ 1997ءاور 1998ءکے درمیان ایک سال وزیراعظم رہے‘ اٹل بہاری واجپائی ان کے بعد وزیراعظم بنے تھے‘ گجرال جہلم میں پیدا ہوئے تھے‘ ان کی ساری تعلیم جہلم اور لاہور کی تھی اور یہ دل سے پاکستان اور بھارت کے تعلقات بہتر دیکھنا چاہتے تھے‘ میاں نواز شریف کے ....مزید پڑھئے‎

اندر کمار گجرال بھارت کے 12 ویں وزیراعظم تھے‘ یہ 1997ءاور 1998ءکے درمیان ایک سال وزیراعظم رہے‘ اٹل بہاری واجپائی ان کے بعد وزیراعظم بنے تھے‘ گجرال جہلم میں پیدا ہوئے تھے‘ ان کی ساری تعلیم جہلم اور لاہور کی تھی اور یہ دل سے پاکستان اور بھارت کے تعلقات بہتر دیکھنا چاہتے تھے‘ میاں نواز شریف کے ....مزید پڑھئے‎