بڑے زلزلے کی تاریخ قریب آ رہی ہے ، 93 فیصد عمارتیں گر جائیں گی، ماہرین کے چونکا دینے والے انکشافات

17  مارچ‬‮  2023

تل ابیب (این این آئی)ایک سینئر اسرائیلی ماہر نے خبردار کیا ہے کہ آنے والے مہینوں میں اس خطے میں بڑا زلزلہ آنے کا امکان ہے ، تاہم دوسری طرف حکومت اور مقامی حکام اس متوقع بڑے زلزلے کے حوالے سے تیار ی میں ناکام ہیں۔ یہ زلزلہ اس قدر شدید اور ہولناک ہوسکتا ہے کہ

اس سے 93 فیصد عمارتیں منہدم ہوسکتی ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق اسرائیل کے سٹیٹ کنٹرولر میتن یاہو اینجل مین نے رپورٹ میں وضاحت کی ہے کہ گزشتہ انتباہات کے باوجود وزارت تعمیرات و ہائوسنگ نے 1124 عمارتوں کا استحکام مکمل نہیں کیا ۔ ان عمار توں کے تحفظ کے لیے ایسے شہروں میں فوری مداخلت کی ضرورت ہے جہاں زلزلے سے سب سے ز یادہ نقصان کا خطرہ ہے۔ یہ اعداد و شمار 93 فیصد عمارتوں کی نمائندگی کرتا ہے جن کا ماضی میں گرنے کے امکان کے طور پر حوالہ دیا گیا تھا۔ اسرائیلی ماہر نے نشاندہی کی کہ اسرائیل شامی افریقی حصے کے قریب واقع ہے اور اس وجہ سے ہر سال یہاں بڑے زلزلے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔میتن یاہو اینجل مین نے مزید کہا کہ اس بات کا قوی امکان ہے کہ جنوبی لبنان اور جنوبی بحیرہ مردار کے درمیانی علاقے میں اگلے پچاس سالوں کے دوران شدید زلزلہ آئے گا۔ انہوں نے حکومت سے تیزی سے کام کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔ انہوں نے کہا دور دراز کے شہروں میں عمارتوں اور بنیادی ڈھانچے کو مضبوط بنانے کے لیے بڑا بجٹ درکار ہے۔ اس صورتحال میں ضروری ہے کہ تمام پیشہ ور جماعتوں سے کام کا عزم لیا جائے اور وسائل کو مناسب طریقے سے تقسیم کرنے کی پالیسی بنائی جائے۔



کالم



فواد چودھری کا قصور


فواد چودھری ہماری سیاست کے ایک طلسماتی کردار…

ہم بھی کیا لوگ ہیں؟

حافظ صاحب میرے بزرگ دوست ہیں‘ میں انہیں 1995ء سے…

مرحوم نذیر ناجی(آخری حصہ)

ہمارے سیاست دان کا سب سے بڑا المیہ ہے یہ اہلیت…

مرحوم نذیر ناجی

نذیر ناجی صاحب کے ساتھ میرا چار ملاقاتوں اور…

گوہر اعجاز اور محسن نقوی

میں یہاں گوہر اعجاز اور محسن نقوی کی کیس سٹڈیز…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے (آخری حصہ)

میاں نواز شریف کانگریس کی مثال لیں‘ یہ دنیا کی…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے

بودھ مت کے قدیم لٹریچر کے مطابق مہاتما بودھ نے…

جنرل باجوہ سے مولانا کی ملاقاتیں

میری پچھلے سال جنرل قمر جاوید باجوہ سے متعدد…

گنڈا پور جیسی توپ

ہم تھوڑی دیر کے لیے جنوری 2022ء میں واپس چلے جاتے…

اب ہار مان لیں

خواجہ سعد رفیق دو نسلوں سے سیاست دان ہیں‘ ان…

خودکش حملہ آور

وہ شہری یونیورسٹی تھی اور ایم اے ماس کمیونی کیشن…