فیکٹری ملازمین نے آٹے کی تقسیم اور معیار چیک کرنے کیلئے آنیوالے ٹائیگر فورس کے2رضاکاروں کی جوتوں اور لاٹھیوں سے پٹائی کردی

  ہفتہ‬‮ 17 اکتوبر‬‮ 2020  |  15:03

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) فلور مل ملازمین اور منیجر نے ملکر مبینہ طورپر ٹائیگر فورس کے رضا کاروں کی پھینٹی لگادی، مذکورہ واقعہ باجوڑ میں پیش آیا، میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انصاف سٹوڈنٹ فیڈریشن کے یوسف دانش، اسداللہ خان اور دیگر نے بتایاکہ باجوڑ فلور ملزکی انتظامیہ نے ان کے دو سینئر ساتھیوں حضرت حبیب اور صلاح الدین کو مل کے اندر ہی مارا، دونوں آئی ایس ایف کے بھی ممبر ز ہیں۔ ان کا کہناتھاکہ ان کے ساتھی سبسڈی پر ملنے والے آٹے کی تقسیم کا معاملہ دیکھنے گئے تھے کہ مل منیجر اور ورکرز نے انہیں جوتوں اور


لاٹھیوں سے پیٹنا شروع کردیا، وہ دونوں انتظامی حکام کی ہدایت پر مل گئے تھے تا کہ آٹے کی تقسیم اور اس کے معیار کو دیکھا جاسکے ۔ آئی ایس ایف عہدیداران نے یہ بھی الزام لگایا کہ دونوں کو اس وقت پیٹا گیا جب انہوں نے آٹے کے معیار کی شکایت کی ، دونوں زخمی اور ڈی ایچ کیو ہسپتال خار میں شفٹ کردیئے گئے ،پولیس نے واقعے کی تصدیق کی اور بتایا کہ مل منیجر کو حراست میں لیکر پوچھ گچھ شروع کردی گئی ہے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

مولانا روم کے تین دروازے

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎