ہائیکورٹ کاشرجیل انعام میمن کو بڑا ریلیف  اہلیہ کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم

  پیر‬‮ 21 ستمبر‬‮ 2020  |  17:59

کراچی(این این آئی)سندھ ہائی کورٹ نے آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے الزام میں سندھ کے سابق وزیر اطلاعات شرجیل انعام میمن کی اہلیہ صدف شرجیل کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) سے نکالنے کا حکم دیتے ہوئے ملک سے باہر جانے کی اجازت دے دی ہے۔شرجیل میمن کیاہلیہ کی جانب سے سندھ ہائی کورٹ میں نام ای سی ایل سے خارج کرنے کی دائر درخواست پر سماعت ہوئی، جس میں درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ وہ دبئی میں کاروبار کرتی ہیں اور کاروبار کے سلسلے میں وقتاً فوقتاً ملک سے باہر جانا پڑتا ہے۔درخواست میں


شرجیل میمن کی اہلیہ نے کہا کہ وہ ضمانت حاصل کرنے سے پہلے دبئی میں ہی رہائش پذیر تھیں ، وزارت داخلہ کو نام ای سی ایل سے خارج کرنے کا حکم دیا جائے۔دوران سماعت نیب پراسیکیوٹر نے شرجیل میمن کی اہلیہ کا نام ای سی ایل سے خارج کرنے کی مخالفت کی جس پر جسٹس کے کے آغا نے ریمارکس دیئے کہ صدف شرجیل ریفرنس میں مرکزی ملزم نہیں ہیں، تاحال ریفرنس میں ملزمان پر فردجرم بھی عائد نہیں ہوئی۔صدف شرجیل نے کہاکہ بیٹا برطانیہ میں زیر تعلیم ہے اس سلسلے میں بھی ملک سے باہر جانا پڑتا ہے۔اس موقع پر عدالت نے شرجیل میمن کی اہلیہ کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دیتے صدف شرجیل کو 22 ستمبر سے 2 اکتوبر تک ملک سے باہر جانے کی اجازت دیدی  جبکہ نیب کے وکیل کی جانب سے مخالفت کی گئی۔واضح رہے کہ سندھ ہائیکورٹ نے آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے الزام میں شرجیل میمن اور فیملی کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کا حکم دیا تھا۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

مولانا روم کے تین دروازے

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎