وزیراعظم عمران خان نے سمندر پار پاکستانیوں کیلئےایسا شاندار اعلان کر دیا جس کا پاکستانی عوام کوکب سے انتظار تھا

12  اکتوبر‬‮  2018

اسلام آباد (آئی این پی)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ سمندر پار پاکستانیوں کیلئے خصوصی مراعات کے پیکج کا اعلان کررہے ہیں، ترسیلات زر میں اضافہ کیلئے ہر طرح کی رکاوٹوں کو ختم کیا جائے گا، ترسیلات زر20بلین ڈالر سے 30یا 40بلین ڈالر تک بڑھے گی، اوورسیز پاکستانیوں کی جائیداد کا تحفظ یقینی بنائیں۔ جمعہ کو سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئیٹر پر اپنے ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ

سمندر پار پاکستانیوں سے تفصیلی ملاقات ہوئی ہے، ہم سمندر پار پاکستانیوں کیلئے خصوصی مراعات کے پیکج کا اعلان کررہے ہیں، ترسیلات زر پاکستان بھیجنے والوں کی حوصلہ افزائی کی جائے گی، ہم تمام مشکلات حل اور طریقہ کار کو آسان بنا رہے ہیں، فلپائن کی مثال سامنے ہے، انہوں نے کامیابی سے کیا کچھ کیا، ہر طرح کی رکاوٹ ختم کریں گے تا کہ ترسیلات زر میں اضافہ ہو۔ انہوں نے کہا کہ ترسیلات زر 20بلین ڈالر سے 30یا 40بلین ڈالر تک بڑھے گی، ترسیلات زر بینکنگ چینل کے ذریعے آئے گی، اوورسیز پاکستانیوں کی جائیداد کا تحفظ یقینی بنائیں گے۔ دوسری جانب وزیراعظم کی زیر صدارت سمندر پار پاکستانیوں سے متعلق جائزہ اجلاس ہوا۔ اجلاس میں وزیراعظم کو وزارت سمندر پار پاکستانیز کی بریفنگ دی گئی۔ اس موقع پر معاون خصوصی زلفی بخاری نے وزارت کی کارکردگی پر بریفنگ دی۔ اجلاس میں وزیراعظم نے تارکین وطن کے مسائل فوری حل کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ اوورسیز پاکستانی قومی اثاثہ ہیں ان کے تحفظات کو دور کیا جائیگا۔ تارکین وطن کے مسائل حل کرنے کے لئے روڈ میپ جلد مرتب کیا جائے گا۔

موضوعات:



کالم



مرحوم نذیر ناجی(آخری حصہ)


ہمارے سیاست دان کا سب سے بڑا المیہ ہے یہ اہلیت…

مرحوم نذیر ناجی

نذیر ناجی صاحب کے ساتھ میرا چار ملاقاتوں اور…

گوہر اعجاز اور محسن نقوی

میں یہاں گوہر اعجاز اور محسن نقوی کی کیس سٹڈیز…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے (آخری حصہ)

میاں نواز شریف کانگریس کی مثال لیں‘ یہ دنیا کی…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے

بودھ مت کے قدیم لٹریچر کے مطابق مہاتما بودھ نے…

جنرل باجوہ سے مولانا کی ملاقاتیں

میری پچھلے سال جنرل قمر جاوید باجوہ سے متعدد…

گنڈا پور جیسی توپ

ہم تھوڑی دیر کے لیے جنوری 2022ء میں واپس چلے جاتے…

اب ہار مان لیں

خواجہ سعد رفیق دو نسلوں سے سیاست دان ہیں‘ ان…

خودکش حملہ آور

وہ شہری یونیورسٹی تھی اور ایم اے ماس کمیونی کیشن…

برداشت

بات بہت معمولی تھی‘ میں نے انہیں پانچ بجے کا…

کیا ضرورت تھی

میں اتفاق کرتا ہوں عدت میں نکاح کا کیس واقعی نہیں…