عمران خان اب جہانگیرترین کا سامنا نہیں کرسکے گا جہانگیرترین کے اسٹیبلشمنٹ کیساتھ بہت اچھے تعلقات ہو گئے ہیں حیران کن انکشافات

  پیر‬‮ 9 ‬‮نومبر‬‮ 2020  |  10:45

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)معروف صحافی اور تجزیہ کار ہارون الرشید نے کہا ہے کہ عمران خان اب جہانگیرترین کا سامنا نہیں کرسکے گا، جہانگیرترین نے سگنل دیا کہ ان کے اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ بہت اچھے تعلقات ہیں، عمران خان کو چاہیے کہاپنے تعلقات بہتر بنائیں۔ نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جہانگیرترین ہسپتال گئے اور چودھری شجاعت کی عیادت کی، عمران خان کیلئے کوئی مرے یا جیئے، عمران خان کسی کے گھر تعزیت، شادی غمی خوشی میں نہیں جاتے، ٹیلیفون بھی نہیں کرتے ۔انہوں نے کہا کہ جہانگیرترین نے بڑا واضح سگنل دیا ہے، ان


کے اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ تعلقات ہیں اور بہت اچھے تعلقات ہیں، بیچ میں کچھ دوست پڑے ہیں ان کو سمجھایا ہے کہ یہ کام کا آدمی ہے۔ بیوروکریسی پر اختیار ہے۔اب گلگت بلتستان میں الیکشن ہورہے ہیں، اگر یہ ہوتے تو صورتحال مختلف ہوتی۔ جہانگیرترین نے سگنل دیا کہ اب چینی کی قیمت کم کرنے کیلئے کردار ادا کروں گا، 15نومبر سے چینی کی کرشنگ شروع ہوگی، پیداوار بڑھے گی تو چینی کی قیمت بھی کم ہوجائے گی۔انہوں نے عمران خان کے خلاف کوئی بات نہیں کی، وہ پیپلزپارٹی میں نہیں جاسکتا، پیپلزپارٹی سندھ تک محدود ہے، ن لیگ میں نہیں جائے گا وہاں اس کوکوئی فائدہ نہیں ہوگا۔اب یہ عمران خان پر منحصر ہے کیونکہ جہانگیرترین کا کردار آنے والے دنوں میں بڑھ سکتا ہے۔ ہارون الرشید نے مزیدکہا کہ ایک مجھے خطرہ ہے کہ عمران خان اب جہانگیرترین کا سامنا نہیں کرسکے گا، حالانکہ جہانگیرترین ان کو شرمندہ نہیں کرے گا۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

براڈ شیٹ

شریف الدین پیرزادہ عرف عام میں جدہ کے جادوگر کہلاتے تھے‘ یہ ملک کے واحد قانون دان تھے جو قانون سے ہر قسم کی گنجائش نکال لیتے تھے چناں چہ ایوب خان سے لے کر جنرل پرویز مشرف تک یہ ملک کے ہر آمر کے دست راست رہے‘ جنرل ضیاء الحق مرشد جب کہ جنرل پرویز مشرف انہیں ....مزید پڑھئے‎

شریف الدین پیرزادہ عرف عام میں جدہ کے جادوگر کہلاتے تھے‘ یہ ملک کے واحد قانون دان تھے جو قانون سے ہر قسم کی گنجائش نکال لیتے تھے چناں چہ ایوب خان سے لے کر جنرل پرویز مشرف تک یہ ملک کے ہر آمر کے دست راست رہے‘ جنرل ضیاء الحق مرشد جب کہ جنرل پرویز مشرف انہیں ....مزید پڑھئے‎