آٹا بحرا ن ، وزیراعظم عمران خان کیا فوڈ کنٹرول کو فون کر کےہدایا ت دینگے،یہ کام کن کا ہے؟فواد چوہدری نے ذمہ داروں کا تعین کردیا

  منگل‬‮ 21 جنوری‬‮ 2020  |  10:00

اسلام آباد( آن لائن)وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہے کہ پوری کابینہ عثمان بزدار کو ہٹانے کی حامی ہے مگر اظہار نہیں کرتی، عمران خان دیانتداری سے کام کررہے ہیں دوسروں کو بھی ذمہ داری پوری کرنی چاہیے، ایک دو وزراء احمقانہ باتیں کرتے رہتے ہیں وہ فردوس عاشق اعوان ہو یا کوئی اورہو۔اگر کوئی احمقانہ بات کرے گا تو اسے احمقانہ ہی کہوں گا۔نجی نیوز چینل سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں جو گفتگو کرتا ہوں تقریباً سب کا یہی خیال ہے، میرانکتہ یہ ہے وہ اصلاحات کہاں ہیں جن کاوعدہ کیا


تھا۔انہوں نے کہاکہ میں نے وزیراعظم عمران خان کو لکھے گئے خط میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کو ہٹانے کے حوالے سے کچھ نہیں لکھا، عمران خان عثمان بزدار کو نہیں ہٹا رہے وہ خود ہی خیال کرلیں، عثمان بزدار سے کہتا ہوں اب تگڑے ہوجائیں اور کارکردگی دکھائیں۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی ناکام ہرگز وزیراعظم کی ناکامی نہیں ہوسکتی،وفاقی حکومت صوبوں کے بغیر کاکردگی نہیں دکھا سکتی کیونکہ 62فیصد فنڈز صوبوں کو چلے جاتے ہیں ، لوگ ناکام ہوتے ہیں تو ذمہ داری عمران خان ڈال دیتے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ کابینہ میں تمام لوگ عثمان بزدار کو ہٹانے کے حامی ہیں لیکن کوئی باقاعدہ اظہار نہیں کرتا ۔ فواد چوہدری نے کہا کہ میڈیاکہہ رہاہے آٹے کابحران ہے تواس کامطلب بحران ہے،کیا وزیراعظم فوڈ کنٹرول کو فون کر کے ہدایات دیں گے؟ یہ کام تو صوبوں کا ہے، گورننس سسٹم کابیڑہ غرق مسلم لیگ ن نے کیا ہے، شہبازشریف نے تنہاء 12 ، 13ٹریلین روپے خرچ کیے، جوبلدیاتی اداروں نے خرچ کرنے تھے شہبازشریف کے پاس چلے گئے۔ایک اور سوال پر انہوں نے کہاکہ عمران خان تو دیانتداری سے کام کررہے ہیں لیکن دوسرے لوگوں کو بھی اپنی ذمہ داریاں دیانتداری سے پوری کرنی چاہئیں۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

ہمیں جاگنا ہو گا

چارلی ہیبڈو فرانس کا ایک ہفت روزہ میگزین ہے‘ یہ میگزین 1970ء میں شروع ہوا‘1981ء میں بند ہوا پھر 1991ء میں دوبارہ لانچ ہوا اور انتظامیہ نے اسے فروری2015ء میں ہمیشہ کے لیے بند کرنے کا فیصلہ کر لیا‘ مالکان شرارتی ذہنیت کے مالک ہیں‘یہ میگزین کو مشہور کرنے کے لیے نبی اکرمؐ کے گستاخانہ خاکے شائع کرتے ....مزید پڑھئے‎

چارلی ہیبڈو فرانس کا ایک ہفت روزہ میگزین ہے‘ یہ میگزین 1970ء میں شروع ہوا‘1981ء میں بند ہوا پھر 1991ء میں دوبارہ لانچ ہوا اور انتظامیہ نے اسے فروری2015ء میں ہمیشہ کے لیے بند کرنے کا فیصلہ کر لیا‘ مالکان شرارتی ذہنیت کے مالک ہیں‘یہ میگزین کو مشہور کرنے کے لیے نبی اکرمؐ کے گستاخانہ خاکے شائع کرتے ....مزید پڑھئے‎