ملکی تاریخ کاسب سے بڑا ٹیکس چوری سکینڈل بے نقاب، قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان

  ہفتہ‬‮ 18 جنوری‬‮ 2020  |  14:29

اسلام آباد ( آن لائن)کسٹم حکام کی ملی بھگت سے ملکی تاریخ کا سب سے بڑا ٹیکس چوری سکینڈل سامنے آیا ہے، اس سکینڈل سے ملکی خزانے کو اربوں روپے نقصان پہنچایا گیا،ذرائع نے بتایا کہ پاکستان کی تاریخ میں ٹیکس چوری کا بہت بڑا سکینڈل بے نقاب ہوگیا ہے ، گزشتہ سال 2019میں نومبر اور دسمبر کے دوران 384 ٹریلر افغانستان سے کسٹم سٹیشن طورخم کے راشی اہلکاروں کی ملی بھگت سے بغیر ٹیکس و ڈیوٹی مال بردار گاڑیاں پاکستان میںداخل ہوئی جس سے قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان ہوا۔ اپریزمنٹ اور پروینٹیو کسٹم کے رشوت خور


افسران اس سکینڈل میں ملوث ہیں ۔دوسری جانب سے کسٹم انٹلیجنس کے ڈائریکٹر راشد حبیب یوسف زئی نے بتایا کہ سکینڈل کی تحقیقات شروع کر دی ہیں ،ابتدائی تحقیقات میں معلوم ہوا ہے کہ بادام اور پستہ سے بھرے ٹریلر کے کاغذات پر ٹیکس ٹماٹر کا جمع کیا گیا تھا،ان کا کہنا تھا کہ اس سکینڈل میں جو بھی ملوث ہوا ہے اس کو  قرارواقعی سزا دی جائے گی۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

بالا مستری

ہم اگر حضرت عمر فاروقؓ کی شخصیت کو دو لفظوں میں بیان کرنا چاہیں تو ”عدل فاروقی“ لکھ دینا کافی ہو گا‘ حضرت عمرؓ انصاف کے معاملے میں انقلابی تھے‘ یہ عدل کرتے وقت شریعت سے بھی گنجائش نکال لیتے تھے مثلاً حجاز اور شام میں قحط پڑا‘ لوگوں نے بھوک سے تنگ آ کر خوراک چوری کرنا ....مزید پڑھئے‎

ہم اگر حضرت عمر فاروقؓ کی شخصیت کو دو لفظوں میں بیان کرنا چاہیں تو ”عدل فاروقی“ لکھ دینا کافی ہو گا‘ حضرت عمرؓ انصاف کے معاملے میں انقلابی تھے‘ یہ عدل کرتے وقت شریعت سے بھی گنجائش نکال لیتے تھے مثلاً حجاز اور شام میں قحط پڑا‘ لوگوں نے بھوک سے تنگ آ کر خوراک چوری کرنا ....مزید پڑھئے‎