فضل الرحمن کی پارٹی میں رہا ہوں، ان کا دین سے کوئی تعلق نہیں مولانا کے گھر کے بھیدی نےہی لنکا ڈھا دی، اہم انکشافات

  منگل‬‮ 8 اکتوبر‬‮ 2019  |  11:36

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) جے یو آئی(ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے رواں ماہ کی 27تاریخ کو آزادی مارچ اور دھرنے کا اعلان کر رکھا ہے۔ اس حوالہ سے جب ایک شہری سے رائے طلب کی گئی تو اس کا کہنا تھا کہ میں مولانا فضل الرحمن کی جماعت میں رہ چکا ہوں۔ اِن کا دین سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ شہری کا کہنا تھا کہ کالج کے زمانے میں میں بھی جمعیت میں تھا۔میں جمعیت کا صدر تھا ، لیکن اس سارے عرصہمیں میں نے ایک بات نوٹ کی ہے کہ مولانا صاحب کا جہاں اپنا مفاد ہوتا ہے وہ


وہی کام کرتے ہیں، ان کا دین سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ پہلے ہر کوئی کہتا تھا کہ یہ بہت اچھا بندہ ہے لیکن اب میں بھی جتنے لوگوں کو جانتا ہوں کوئی بھی ان کا ساتھ نہیں دے رہا۔ ہم نے ایک بات نوٹ کی ہےکہ مولانا صاحب کبھی نواز شریف اور کبھی زرداری کے پیچھے بھاگتے رہتے ہیں۔دین کی انہوں نے ہمیں دس پندرہ سال میں آج تک کوئی چیز نہیں دی ہے ۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

میرے دو استاد

سنتوش آنند 1939ء میں سکندر آباد میں پیدا ہوئے‘ یہ بلند شہر کا چھوٹا سا قصبہ تھا‘ فضا میں اردو‘ تہذیب اور جذبات تینوں رچے بسے تھے چناں چہ وہاں کا ہر پہلا شخص شاعر اور دوسرا سخن شناس ہوتا تھا‘ سنتوش جی ان ہوائوں میں پل کر جوان ہوئے‘ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے لائبریری سائنس کی ڈگری لی ....مزید پڑھئے‎

سنتوش آنند 1939ء میں سکندر آباد میں پیدا ہوئے‘ یہ بلند شہر کا چھوٹا سا قصبہ تھا‘ فضا میں اردو‘ تہذیب اور جذبات تینوں رچے بسے تھے چناں چہ وہاں کا ہر پہلا شخص شاعر اور دوسرا سخن شناس ہوتا تھا‘ سنتوش جی ان ہوائوں میں پل کر جوان ہوئے‘ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے لائبریری سائنس کی ڈگری لی ....مزید پڑھئے‎