’’قانون سب کیلئے ہے‘‘ چیف جسٹس ہائی کورٹ کا بھائی عہدے سے فارغ بڑی وجہ بھی سامنے آ گئی

  پیر‬‮ 26 ستمبر‬‮ 2016  |  11:40

اسلام آباد(آن لائن) سپریم کورٹ نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں خلاف ضابطہ تقرریاں کالعدم قرار دے دیں۔جسٹس امیر ہانی مسلم کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں 73ملازمین کی خلاف ضابطہ تقرریوں سے متعلق کیس کی سماعت کی تھی، عدالت عظمٰی نے وکلاء 4 کے دلائل مکمل ہونے پر 16مئی کو فیصلہ محفوظ کیا تھا۔ سپریم کورٹ نے اپنے فیصلے میں خلاف ضابطہ تمام تقرریاں کالعدم قرار دے دیں ہیں۔درخواست گزار کے وکیل نے سماعت کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ اسلام آباد ہائی


کورٹ کے 150 کے قریب ملازمین پر لاگو ہوگا، فیصلے کا اطلاق 2011 سے آج تک کی بھرتیوں پر ہوگا، فیصلے سے چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ کے بھائی ادریس کاسی بھی فارغ ہوں گے جو کہ ہائی کورٹ میں ایڈیشنل رجسٹرارتعینات تھے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

ہم اپنے بچوں کے قاتل ہیں

میرے بیٹے نے چند دن پہلے مجھ سے ایک عجیب سوال کیا‘ اس نے پوچھا ’’آپ نے کبھی سوچا آپ کے بچے آپ کی عزت کیوں کرتے ہیں‘‘ میں نے قہقہہ لگا کر جواب دیا ’’دنیا کے تمام بچے اپنے والدین کی عزت کرتے ہیں‘ میں باپ ہوں اور باپ کی حیثیت سے مجھے عزت کی سہولت (Privilege) حاصل ہے‘‘ ....مزید پڑھئے‎

میرے بیٹے نے چند دن پہلے مجھ سے ایک عجیب سوال کیا‘ اس نے پوچھا ’’آپ نے کبھی سوچا آپ کے بچے آپ کی عزت کیوں کرتے ہیں‘‘ میں نے قہقہہ لگا کر جواب دیا ’’دنیا کے تمام بچے اپنے والدین کی عزت کرتے ہیں‘ میں باپ ہوں اور باپ کی حیثیت سے مجھے عزت کی سہولت (Privilege) حاصل ہے‘‘ ....مزید پڑھئے‎