نئے آرمی چیف جنرل عاصم منیر بھی فاسٹ باؤلر نکلے

  منگل‬‮ 29 ‬‮نومبر‬‮ 2022  |  15:58

راولپنڈی (این این آئی)پاک فوج کے 17ویں سربراہ کی حیثیت سے کمان سنبھالنے والے آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر کے محلے داروں نے ان کے حوالے سے کچھ پرانی یادوں کو تازہ کیا۔نجی ٹی وی کی ایک رپورٹ میں آرمی چیف کے محلے داروں نے گفتگو کے

دوران ان سے متعلق دلچسپ یادیں شیئر کیں۔رپورٹ کے مطابق آرمی چیف جنرل عاصم منیر کا بچپن راولپنڈی کے علاقے ڈیری حسن آباد میں گزرا، ان کا تعلق علاقے کے معروف، دینی گھرانے سے ہے، عاصم منیر کا آبائی گھر ان کی سادہ انداز زندگی کامنہ بولتا ثبوت ہے۔رپورٹ میں بتایا گیا کہ جنرل عاصم بچپن میں محلے میں ہی کرکٹ کھیلا کرتے تھے، انہوں نے کالج روڈ پر واقع مرکزی مدرسہ دارالتجوید سے قرآن حفظ کیا، ان کے تمام بھائی، بہنیں بھی حافظ قرآن ہیں۔مدرسہ دارالتجوید کے مہتم اعلیٰ حافظ نسیم خلیل نے بتایا کہ عاصم منیر کو 6 سے 7 سال کی عمر میں ادارے میں داخل کروایا گیا تھا جہاں والد صاحب نے انہیں قرآن حفظ کروایا۔رپورٹ میں محلے داروں نے جنرل عاصم منیر کی بطور آرمی چیف تعیناتی پر خوشی کا اظہار کیا ہے۔ایک خاتون محلے دار نے کہا کہ عاصم منیر نے اپنی زندگی میں کبھی کسی کو تکلیف نہیں دی۔ایک شخص نے بتایا کہ جنرل عاصم منیر کرکٹ بھی اسی علاقے میں کھیلتے تھے اور فاسٹ بولنگ بھی بہت تیز کرواتے تھے۔



زیرو پوائنٹ

اب تو آنکھیں کھول لیں

یہ14 جنوری کی رات تھی‘ پشاور کے سربند تھانے پر دستی بم سے حملہ ہو گیا‘ دھماکا ہوا اور پورا علاقہ لرز گیا‘ وائر لیس پر کال چلی اور ڈی ایس پی سردار حسین فوری طور پر تھانے پہنچ گئے‘ ان کے دو محافظ بھی ان کے ساتھ تھے‘یہ لوگ گاڑی سے اترے‘ چند قدم لیے‘ دور سے فائر ہوا‘سردار ....مزید پڑھئے‎

یہ14 جنوری کی رات تھی‘ پشاور کے سربند تھانے پر دستی بم سے حملہ ہو گیا‘ دھماکا ہوا اور پورا علاقہ لرز گیا‘ وائر لیس پر کال چلی اور ڈی ایس پی سردار حسین فوری طور پر تھانے پہنچ گئے‘ ان کے دو محافظ بھی ان کے ساتھ تھے‘یہ لوگ گاڑی سے اترے‘ چند قدم لیے‘ دور سے فائر ہوا‘سردار ....مزید پڑھئے‎