سینٹ الیکشن: پنجاب کے2 بڑوں پر ذمہ داریاں عائد

  منگل‬‮ 23 فروری‬‮ 2021  |  11:52

لاہور (آن لائن) وزیراعظم عمران خان نے 3 مارچ 2021ء کو ہونے والے سینٹ الیکشن میں سرکاری امیدواروں کی کامیابی کو یقینی بنانے کے لئے پنجاب کے دو بڑوں کے کندھوں پر ذمہ داریاں ڈال دی ہیں۔ ان دو بڑوں میں گورنر پنجاب چودھری محمد سرور اور وزیراعلیٰ پنجابسردار عثمان بزدار شامل ہیں۔ بتایا گیا ہے سینٹ انتخابات میں سرکاری امیدواروں کی کامیابی کے لئے جوڑ توڑ کی ذمہ داری گورنر پنجاب پر عائد کی گئی ہے۔ جو آئندہ ایک روز میں اپنی تمام مصروفیات معطل کر کے اسلام آباد روانہ ہوجائیں گے۔ جہاں وہ اسلام آباد میں ڈیرے ڈالتے


ہوئے حکومتی اور اتحادی اراکین قومی اسمبلی سے روزانہ کی بنیاد پر ملاقاتیں کریں گے جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار پر پنجاب کے اراکین قومی اور صوبائی اسمبلی سے جوڑ توڑ کی ذمہ داری عائد کی گئی ہے۔ جنہوں نے گزشتہ روز پاکستان تحریک انصاف کے صوبائی صدر اعجاز چودھری سمیت دیگر سینٹ امیدواروں جن کا تعلق (ق) لیگ سے بھی ہے ملاقاتیں کر کے اپنی ذمہ داریاں کا سلسلہ شروع کردیا ہے۔ وزیراعلیٰ پنجاب بھی پنجاب اسمبلی کے اراکین سے روزانہ کی بنیاد پر ملاقاتیں کریں گے جبکہ پیر کے روز انہوں نے جنوبی پنجاب سے تعلق رکھنے والے اراکین اسمبلی سے ملاقاتیں کی ہیں۔ یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے سینٹ میں پاکستان ڈیموکریٹ موومنٹ کے امیدوار یوسف رضا گیلانی کے مقابلے میں حکومتی امیدوار عبدالحفیظ شیخ کی کامیابی کا ٹاسک بھی گورنر پنجاب کے حوالے کردیا ہے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

کلاسیکل مثال

مجھے چند دن قبل ایک دوست نے خوف ناک واقعہ سنایا‘ ان کی گلی میں ایک خاندان رہتا ہے‘ خاوند ملک سے باہر محنت مزدوری کرتا ہے‘ بیٹا شادی شدہ ہے لیکن بے روزگار ہے‘ ایک پوتا اور پوتی بھی ہے‘ خاتون بوڑھی اور بیمار تھی‘ وہ برسوں سے شوگر کی مریض تھی لیکن ادویات اور خوراک میں ....مزید پڑھئے‎

مجھے چند دن قبل ایک دوست نے خوف ناک واقعہ سنایا‘ ان کی گلی میں ایک خاندان رہتا ہے‘ خاوند ملک سے باہر محنت مزدوری کرتا ہے‘ بیٹا شادی شدہ ہے لیکن بے روزگار ہے‘ ایک پوتا اور پوتی بھی ہے‘ خاتون بوڑھی اور بیمار تھی‘ وہ برسوں سے شوگر کی مریض تھی لیکن ادویات اور خوراک میں ....مزید پڑھئے‎