’’لندن کا انڈر گرائونڈ میٹرو سٹیشن ہولناک دھماکہ سے گونج اٹھا ‘‘ ہولناک واقعہ میں متعدد افراد نشانہ بن گئے۔۔ہر طرف افراتفری

  جمعہ‬‮ 15 ستمبر‬‮ 2017  |  14:00

لندن(این این آئی)لندن میں زیر زمین میٹرو اسٹیشن میں دھماکے کے بعد بھگڈر کے نتیجے میںدس افراد زخمی ہوگئے،واقعے کے بعد مغربی لندن میں ٹرین سروس معطل کردی گئی۔غیر ملکی خبر رساں اداروں کے مطابق دھماکے کے بعد مغربی لندن میں ٹرین سروس معطل کردی گئی۔واقعے کی اطلاع ملتے ہی ریسیکیو عملہ اور پولیس موقع پر پہنچی اور متاثرین کو ہسپتال منتقل کرنے کے
کام کا آغاز کیا۔لندن پولیس اور ایمبولینس سروس کا کہنا تھا کہ وہ شہر کے مغربی حصے میں قائم زیر زمین ریلوے اسٹیشن میں ہونے والے واقعہ کو دیکھ رہے ہیں، جسے میڈیا میں آنے والی رپورٹس میں دھماکا قرار دیا گیا۔لندن میڑو پولیٹن پولیس نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ ہم پروسون گرین ٹیوب اسٹیشن میں ہونے والے واقعے سے آگاہ ہیں، اور افسران کو روانہ کیا جاچکا ہے۔واقعے کے بعد اسٹیشن کو بند کردیا گیا اور اس کے ساتھ ہی ضلعی لائن پر موجود تمام اسٹیشنز کو بھی بند کردیا گیا۔ٹرین میں موجود ایک سفید کنٹینر میں دھماکا ہوا جس کے نتیجے میں مسافروں کو چہرے پر زخم آئے۔یہ زخم ’انتہائی شدید‘ ہیں، جس سے متاثرین کے بال جھڑ گئے۔عینی شاہدین نے کہاکہ دھماکے کے بعد مسافروں کو ڈسٹرکٹ لائن کے پارسنز گرین سٹیشن پر افراتفری کے عالم میں دیکھا گیا ۔جب لوگوں نے دھماکے کی آواز سنی تو وہ افراتفری کے عالم میں ٹرین سے دور بھاگے۔وہاں سے بھاگتے ہوئے لوگوں کو خراشیں اور چوٹیں آئی ہیں۔ بہت زیادہ افراتفری کا عالم تھا۔24 سالہ ایلیکس لٹل فیلڈ نے کہاکہ میں پارسنز گرین ٹیوب سٹیشن کے قریب ہی تھا کہ لوگوں کو انتشار کے عالم میں پلیٹ فارم پر بھاگتے دیکھا۔ میں نے پولیس اہلکار اور فائر بریگیڈ والے دیکھے جو لوگوں کو پیچھے ہٹا رہے تھے۔میں نے لوگوں کا ہجوم اور مسلح پولیس والے دیکھے۔ بہت سے لوگ صدمے سے دوچار تھے۔



موضوعات:

زیرو پوائنٹ

یہ بھی پاکستان ہے

یہ تین لوگوں کی تین کہانیاں ہیں‘ میں جب ان تینوں لوگوں سے متعارف ہوا‘ میں نے ان کی داستانیں سنی تو میرا پہلا تاثر تھا کیا یہ بھی پاکستانی ہیں؟ اور اگر یہ پاکستانی ہیں تو پھر ہم کون ہیں؟ آپ کو اس سوال کے جواب سے پہلے یہ تین کہانیاں پڑھنی چاہییں۔ پہلی کہانی کے ہیرو خالد جاوید ....مزید پڑھئے‎

یہ تین لوگوں کی تین کہانیاں ہیں‘ میں جب ان تینوں لوگوں سے متعارف ہوا‘ میں نے ان کی داستانیں سنی تو میرا پہلا تاثر تھا کیا یہ بھی پاکستانی ہیں؟ اور اگر یہ پاکستانی ہیں تو پھر ہم کون ہیں؟ آپ کو اس سوال کے جواب سے پہلے یہ تین کہانیاں پڑھنی چاہییں۔ پہلی کہانی کے ہیرو خالد جاوید ....مزید پڑھئے‎