ریاضی کا سوال جس نے دنیا کو پریشان کر دیا

  ہفتہ‬‮ 18 اپریل‬‮ 2015  |  11:53

اسلام آ باد( نیوز ڈیسک )امریکہ میں سٹینڈرڈائز ٹیسٹنگ کے طریقہ کار کو حالیہ چند برسوں میں کافی تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے، تاہم غالباً آپ سنگاپور میں ٹیسٹنگ کے طریقہ کار سے واقف نہ ہوں گے۔ سنگاپور میں ٹیسٹنگ کا معیار اس قدر بلند ہے کہ یہاں 14برس کی عمر کے بچے کے لئے تیار کیئے جانے والے سوال کو بالغان بھی حل کرنے میں ناکام ہیں۔ اس سوال میں خاتون کی تاریخ پیدائش پوچھی گئی ہے اور ساتھ10ممکنہ جوابات دیئے گئے ہیں۔ درست جواب تک پہنچنے کیلئے کچھ اشارے بھی دیئے گئے ہیں۔ ان اشاروں کے مطابق


سوال پوچھنے والی خاتون شیرل البرٹ کو اپنی پیدائش کا مہینہ بتاتی ہے جبکہ اپنے دوسرے ساتھی برنارڈ کو پیدائش کی تاریخ بتاتی ہے۔ البرٹ کہتا ہے کہ مجھے شیرل کی تاریخ پیدائش نہیں معلوم لیکن مجھے معلوم ہے کہ برنارڈ کو بھی معلوم نہیں ہے۔ برنارڈ کہتا ہے کہ پہلے مجھے معلوم نہ تھا کہ شیرل کی سالگرہ کب ہے، لیکن اب مجھے معلوم ہے۔ اس پر البرٹ کہتا ہے کہ پھر مجھے بھی معلوم ہے کہ شیرل کی سالگرہ کب ہے۔ سنگاپور کی وزارت تعلیم کی جانب سے تاحال یہ واضح نہیں کیا گیا ہے کہ آیا یہ سوال سچ مچ میں نصاب کا حصہ ہے یا نہیں تاہم فیس بک پر یہ بے حد مقبول ہورہا ہے اور سوشل ویب سائٹ استعمال کرنے والے افراد اس کا جواب تلاش کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ اس سوال کا درست جواب16جولائی ہے جس تک پہنچنے کیلئے اس ذہانت سے کہیں زیادہ ذہانت، منطق اور حساب پر عبور درکار ہے جس قدر کے آٹھویں جماعت کے بچے کے پاس ہوتا ہے۔ اس حوالے سے یہ اطلاعات بھی موجود ہیں کہ یہ سوال عام نصاب کا حصہ نہیں ہے بلکہ سنگاپور اینڈ ایشیئن سکول میتھس اولمپیڈ کے لئے ٹیسٹ میں شامل سوال ہے۔