مریم نواز، یوسف رضا گیلانی اور حیدر گیلانی کی گرفتاری کا خدشہ، پی ڈی ایم رہنما کا انتخاب بھی کالعدم قرار دیے جانے کا امکان

  منگل‬‮ 9 مارچ‬‮ 2021  |  12:02

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وزیراعظم اور پیپلزپارٹی کے رہنما یوسف رضا گیلانی کا سینیٹر کا انتخاب کالعدم قرار دیا جا سکتا ہے، اس بات کا دعویٰ قانونی ماہرین نے کیا ہے، قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ ویڈیو اسکینڈل کی وجہ سے ایسا ہو سکتا ہے۔ قانونی ماہرین کی رائے کے مطابق ویڈیو بھی سامنے آ گئی ہے اور اس ویڈیو کے کرداروں نے اس بات کا اعتراف بھی کر لیا ہے۔ سینٹالیکشن میں ووٹوں کی خرید و فروخت بھی ثابت ہو چکی ہے، جسے بنیاد بنا کر علی حیدر گیلانی، یوسف رضاگیلانی او رمریم نواز گرفتار بھی ہو سکتے


ہیں، آفتاب باجوہ ایڈووکیٹ کا کہنا ہے کہ ویڈیوز ناقابل تردید شواہد ہیں جس سے پتہ چلتا ہے کہ سینٹ الیکشن شفاف نہیں تھے، انہوں نے کہا کہ اس سکینڈل کے سامنے آنے کی وجہ سے یہاں دوبارہ انتخاب کا حکم ہونا چاہیے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

راﺅنڈ اباﺅٹ

اندر کمار گجرال بھارت کے 12 ویں وزیراعظم تھے‘ یہ 1997ءاور 1998ءکے درمیان ایک سال وزیراعظم رہے‘ اٹل بہاری واجپائی ان کے بعد وزیراعظم بنے تھے‘ گجرال جہلم میں پیدا ہوئے تھے‘ ان کی ساری تعلیم جہلم اور لاہور کی تھی اور یہ دل سے پاکستان اور بھارت کے تعلقات بہتر دیکھنا چاہتے تھے‘ میاں نواز شریف کے ....مزید پڑھئے‎

اندر کمار گجرال بھارت کے 12 ویں وزیراعظم تھے‘ یہ 1997ءاور 1998ءکے درمیان ایک سال وزیراعظم رہے‘ اٹل بہاری واجپائی ان کے بعد وزیراعظم بنے تھے‘ گجرال جہلم میں پیدا ہوئے تھے‘ ان کی ساری تعلیم جہلم اور لاہور کی تھی اور یہ دل سے پاکستان اور بھارت کے تعلقات بہتر دیکھنا چاہتے تھے‘ میاں نواز شریف کے ....مزید پڑھئے‎