مریم نوازاور بلاول بھٹو میں سخت ناراضگی کا انکشاف بات مولانا فضل الرحمن تک بھی پہنچ گئی

  منگل‬‮ 19 جنوری‬‮ 2021  |  12:07

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک، این این آئی )ن لیگ کی نائب صدر مریم نواز اور چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو کے مابین ناراضگی کا دعویٰ سامنے آگیا۔نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر صحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ پرسوں رات کو مولانا فضل الرحمان اور مریم نوازکے مابین رابطہ ہوا جس میں مریم نواز نے کہا کہ پیپلز پارٹی این آر او لے گئی ہے اور ہمارے ساتھ دھوکہ کر گئی ہے۔عارف حمید بھٹی کے مطابق مریم نواز اس وقت بلاول بھٹو سے سخت ناراض ہیں اور کہہ رہی ہیں کہ بلاول نے ہمیں چھوڑ دیا،


جس پر مولانا فضل الرحمان نے شکوہ کیا کہ ن لیگ نے بھی ہمیں چھوڑ دیا تھا جس پر دونوں فریقین نے کہا کہ آئندہ پیپلز پارٹی پر انحصار نہیں کرنا۔عارف حمید بھٹی نے مزید کہاکہ اجلاس میں پیپلز پارٹی کے وفد کو یہ باور کروایا گیا کہ بلاول بھٹو اس تحریک کو وقت دیں کیونکہ وزیراعظم کو دی گئی استعفے کی ڈیڈی لائن بھی قریب ہے۔ عارف حمید بھٹی نے مزید کہا کہ مولانا فضل الرحمن کے مدرسوں کے طالب علم ڈنڈوں کے ساتھ اسلام آباد پہنچ گئے۔دوسری جانب آج اپوزیشن کی ریلی کیلئے سکیورٹی پلان تیار کرلیا گیا ہے، 1800سے زائد پولیس اہلکار ڈیوٹی دیں گے،روزنامہ جنگ میں ایوب ناصر کی شائع خبر کے مطابق پارکنگ کنونشن سنٹر میں ہو گی،قومی عمارتوں کی حفاظتیقینی بنائی جائیگی،دریں اثنا پی ڈی ایم کے الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج کے حوالے سے پیپلز پارٹی اسلام آباد کی قیادت نے پارٹی کارکنوں کو ہدایت نامہ جاری کر دیا۔سینئر رہنما پیپلز پارٹی کے رہنما سبط الحیدر بخاری نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی اسلا م آباد کا احتجاجی قافلہ مل پور سےروانہ ہو گا۔انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کے سامنے بھرپور مظاہرہ کیا جائے گا ،پارٹی کے مقامی عہدیدران و تمام کارکنان احتجاج میں شریک ہوں۔انہوں نے کہا کہ شرکاء سینی ٹائزر ، فیس ماسک سمیت تمام کورونا ایس او پیز کا خیال رکھیں۔انہوں نے کہاکہ اسلام آباد سٹی کا جلوس جی ایٹ مرکز سے روانہ ہوگا ۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

آخری موو

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎