فواد چودھری سمیت قومی اسمبلی کے 48 ارکان کی رکنیت معطل

  پیر‬‮ 18 جنوری‬‮ 2021  |  16:40

اسلام آباد (این این آئی)الیکشن کمیشن نے اثاثوں کی تفصیلات جمع نہ کروانے پروفاقی وزیر فواد چوہدری، علی زیدی، عامر لیاقت اور خالد مقبول صدیقی سمیت 154 اراکین اسمبلی کی رکنیت معطل کر دی۔الیکشن کمیشن نے سینیٹ کے 3، قومی اسمبلی کے 48، پنجاب اسمبلی کے 52 اراکین ،سندھ اسمبلی کے 19، کے پی اسمبلی کے 26 اور بلوچستان اسمبلی کے 6 اراکین کی رکنیت معطل ہے۔ جن اراکین کی رکنیت معطل ہوئی ہے ان میں وفاقی وزیر فواد چوہدری ،معاون خصوصی علی نواز اعوان ،وزیر مملکت شبیر قریشی ،وفاقی وزیر فہمیدہ مرزا ،علی زیدی ،3 سینیٹرز مصدق ملک، کامران


مائیکل اور شمیم آفریدی ،سندھ اسمبلی سے تیمور تالپور ،امداد پتافی ، بلوچستان اسمبلی سے سردار یار محمد رند اور اختر لانگو ودیگر شامل ہیں۔الیکشن کمیشن نے فیصلے سے سینیٹ، قومی و صوبائی اسمبلیوں کے سپیکرز کو آگاہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ معطل ارکان ایوان کی کارروائی میں حصہ نہیں لے سکتے اور گوشوارے جمع کروانے تک رکنیت معطل رہے گی۔


زیرو پوائنٹ

آخری موو

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎

سینیٹ کا الیکشن کل اور پلاسی کی جنگ 23 جون 1757ءکو ہوئی اور دونوںنے تاریخ پر اپناگہرا نقش چھوڑا‘ بنگال ہندوستان کی سب سے بڑی اور امیر ریاست تھی‘پورا جنوبی ہندوستان نواب آف بنگال کی کمان میں تھا‘ سراج الدولہ بنگال کا حکمران تھا‘ دوسری طرف لارڈ رابرٹ کلائیو کمپنی سرکار کی فوج کا کمانڈر تھا‘ انگریز کے ....مزید پڑھئے‎