بے روزگاری سے ہمارے گھروں میں فاقے کی نوبت آگئی ،4ماہ سے بے روزگار ملازمین نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹا دیا

  منگل‬‮ 14 جولائی‬‮ 2020  |  23:51

اسلام آباد (این این آئی)مارگلہ کریشنگ انڈسٹری میں کام کرنے والے غریب ملازمین نے چیف جسٹس سپریم کورٹ سے اپیل کردی ۔ منگل کو بے روزگار ملازمین نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹا دیا،چار ماہ سے بے روزگار ملازمین نے چیف جسٹس کے نام سپریم کورٹ میں 16 سے زیادہ درخواستیں دے دی، ملازمین نے کہاکہ کرشنگ انڈسٹری کی اچانک بندش سے ہزاروں خاندان کے چولھے ٹھنڈے پڑھ گئے ہیں، کرشنگ انڈسٹری میں کام کرنے والے دیہاڑی دارمزدور کرونا وائرس میں پریشانیوں میں مبتلا ہیں، سپریم کورٹ نے انڈسٹری بند کرنے کا حکم دیا جس سے ہزاروں افراد بے روزگار


ہوئے۔ ملازمین نے کہاکہ بے روزگاری سے ہمارے گھروں میں فاقے کی نوبت آگئی ہے، ملازمین نے عدالت سے اپنے فیصلے پر نظرثانی کی استدعا کی ۔ ملازمین نے کہاکہ کرونا وائرس کی وجہ سے کہیں اور بھی ملازمت نہیں مل رہی ہے، عدالت ٹیکسلا کرشنگ انڈسٹری کو متبادل راستہ تلاش کرنے تک چلانے کی اجازت دے۔


موضوعات: