’’وقت کے دھتکارے ہوئے لوگ ‘‘

11  فروری‬‮  2017

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)فر فر انگلش بولنے کی بات سننے کو ملے تو یہی خیال آتا ہے کہ آدمی بہت تعلیم یافتہ ہوگا اور اعلیٰ درجے کی کسی ملازمت پر یا مغرب ملک میں رہتا ہوگالیکن اب آپ کو یہ سن کے حیرانی ہو گی کیونکہ چند دن میں سوشل میڈیا پر دھوم مچانے والی وڈیومیں فر فر انگلش بونے والا کوئی مغربی شہری یاکسی اعلیٰ پوسٹ کا مالک نہیں بلکہ ایک بھکاری ہے۔

اس بھکاری نے اپنی کہانی بتاتے ہوئے کہا کہ اس نے ایف ایس سی کرنے کے ساتھ ساتھ تین ڈپلومے بھی کر رکھے ہیں۔بھکاری نے مزید بتایا کہ میں سرکاری ملازم تھا مجھے اپنی والدہ کی دل کی بیماری پر چھٹیاں لینی پڑھیں جس پر مجھے نکال دیا گیا لیکن اب بیروزگاری کی وجہ سے بھیک مانگنے پر مجبور ہوں۔

موضوعات:



کالم



مرحوم نذیر ناجی(آخری حصہ)


ہمارے سیاست دان کا سب سے بڑا المیہ ہے یہ اہلیت…

مرحوم نذیر ناجی

نذیر ناجی صاحب کے ساتھ میرا چار ملاقاتوں اور…

گوہر اعجاز اور محسن نقوی

میں یہاں گوہر اعجاز اور محسن نقوی کی کیس سٹڈیز…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے (آخری حصہ)

میاں نواز شریف کانگریس کی مثال لیں‘ یہ دنیا کی…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے

بودھ مت کے قدیم لٹریچر کے مطابق مہاتما بودھ نے…

جنرل باجوہ سے مولانا کی ملاقاتیں

میری پچھلے سال جنرل قمر جاوید باجوہ سے متعدد…

گنڈا پور جیسی توپ

ہم تھوڑی دیر کے لیے جنوری 2022ء میں واپس چلے جاتے…

اب ہار مان لیں

خواجہ سعد رفیق دو نسلوں سے سیاست دان ہیں‘ ان…

خودکش حملہ آور

وہ شہری یونیورسٹی تھی اور ایم اے ماس کمیونی کیشن…

برداشت

بات بہت معمولی تھی‘ میں نے انہیں پانچ بجے کا…

کیا ضرورت تھی

میں اتفاق کرتا ہوں عدت میں نکاح کا کیس واقعی نہیں…