”کشمیریوں کے غدار پاکستان کے دوست نہیں ہو سکتے“ امارات اور بحرین کی جانب سے مودی کو ایوارڈ دینے پر پاکستان میں شدید ردعمل سامنے آ گیا

  اتوار‬‮ 25 اگست‬‮ 2019  |  23:17

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)”کشمیریوں کے غدار پاکستان کے دوست نہیں ہو سکتے“ یہ بات معروف صحافی حامد میر نے اپنے ٹوئٹ میں کہی۔ معروف صحافی حامد میر نے کہا کہ ”کشمیریوں کے قاتل مودی کو بحرین میں بھی ایوارڈ مل گیاہے ایران کے رہبر علی خامنائی کا شکریہ کہ اس مشکل میں انہوں نے کشمیریوں کے حق میں آواز بلند کی فلسطین اور کشمیر کے ساتھ غداری کرنے والے کبھی پاکستان کے دوست نہیں ہو سکتے۔“ تمام پاکستانیوں نے بھی مودی کو متحدہ عرب امارات اور بحرین کی جانب سے ایوارڈ دینے پر اپنے شدید ردعمل دیا ہے۔ واضح رہے کہ


متحدہ عرب امارات کے بعد بحرین نے بھی بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو اعلیٰ ترین ایوارڈ سے نوازا ہے۔ گزشتہ روز متحدہ عرب امارات کے دورے کے بعد بھارتی وزیراعظم نریندر مودی بحرین کے دارالحکومت منامہ پہنچے تھے، یہ کسی بھی بھارتی وزیراعظم کا اس خلیجی ریاست کا پہلا دورہ تھا۔ بھارتی وزیر اعظم نے امیر بحرین حمد بن عیسیٰ الخلیفہ اور بحرینی ہم منصب شہزادہ خلیفہ بن سلمان الخلیفہ سے علیحدہ علیحدہ ملاقاتیں کیں۔ نریندر مودی کو امیر بحرین حمد بن عیسیٰ الخلیفہ نے ’کنگ حماد آرڈر آف دی رینائسنس‘ کا اعزاز دیا۔ خیال رہے کہ گزشتہ روز متحدہ عرب امارات کی جانب سے بھی بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو اعلیٰ ترین سول اعزاز دیا گیا تھا۔ مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال کے بعد برطانوی رکن پارلیمنٹ ناز شاہ نے اماراتی ولی عہد سے مودی کو اعزاز دینے کے فیصلے پر نظرثانی کا مطالبہ کیا تھا تاہم اس کے باوجود بھی یہ اعزاز بھارتی وزیراعظم کو دیا گیا۔ اس اعزاز پر پاکستانی عوام میں بھی شدید غم و غصہ پایا جاتا ہے اور سوشل میڈیا پر بھی اس عمل کی شدید مذمت کی جارہی ہے۔ دوسری جانب بحرین میں بھارتی وزیراعظم نے بھارتی کمیونٹی سے خطاب بھی کیا اور ساتھ ہی 200 سالہ قدیم ’شری ناتھ‘ مندر میں پوجا پاٹ کی اور پرساد بھی تقسیم کیا۔ بھارتی وزیراعظم نے مندر کی بحالی کے منصوبے کا بھی افتتاح کیا جس پر 42 لاکھ ڈالر لاگت آئے گی۔

موضوعات:

loading...