امریکا کانیاورک ویزا،سب سے زیادہ بھارتی مستفیدہونگے

30  ‬‮نومبر‬‮  2023

واشنگٹن (این این آئی)امریکا دسمبر میں ورک ویزا کے لیے نیا منصوبہ شروع کرنے جارہا ہے جس سے سب سے زیادہ بھارتی شہری مستفید ہوسکیں گے۔غیرملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق دسمبر میں ایچ ون بی ویزا کا ایک پائلٹ پروگرام آغاز کیا جارہا ہے، جس سے بھارت میں ٹیکنالوجی کے شعبے میں کام کرنے والے افراد کی بڑی تعداد کو فائدہ پہنچے گا۔مذکورہ پیشرفت وائٹ ہاس کی جانب سے جون میں وزیراعظم نریندر مودی کے امریکا دورے کے بعد سامنے آئی ہے۔

ایک انٹرویو میں نائب معاون وزیر خارجہ برائے ویزا سروسز جولی اسٹفٹ کا کہناتھا کہ بھارت میں امریکی ویزوں کی مانگ اب بھی بہت زیادہ ہے، چھ، آٹھ اور بارہ ماہ کا انتظار کا وقت نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم اس بات کو یقینی بنانا چاہتے ہیں کہ ہم ڈومیسٹک ویزوں کے عمل کو بھی بہتر بنا رہے ہیں تاکہ بھارتی شہری فائدہ اٹھا سکیں۔جولی اسٹفٹ نے کہا کہ امریکا دسمبر سے تین ماہ کے عرصے کے دوران 20 ہزار غیرملکیوں کو ویزا جاری کرے گا، ان میں سے زیادہ تر امریکا میں رہنے والے بھارتی شہری ہوں گے اور جیسے جیسے یہ آگے بڑھے گا ہم اس میں توسیع کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ امریکا میں ہنرمند افراد میں بھارتی شہریوں کی تعداد زیادہ ہے، ہمیں امید ہے اس پروگرام سے بھارت کو زیادہ فائدہ ہوگا اور جو لوگ اپنا ویزا ری نیو کروانے بھارت آتے ہیں، اس کے بعد انہیں بھارت آنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔جولی اسٹفٹ نے کہا کہ اس حوالے ایک نوٹس جلد سامنے آئے گا، جس میں وضاحت کردی جائے گی کہ کون اس پروگرام میں حصہ لینے کا اہل ہے، جبکہ ڈومیسٹک ویزا کی تجدید کا پروگرام صرف ورک ویزا کے لیے ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ قانون پہلے سے موجود ہے جسے ہم 20 سال سے استعمال نہیں کر رہے ہیں، یہ ان لوگوں کے لیے ہے جو امریکا میں طویل مدت سے یہاں رہ رہے ہیں لیکن بیرون ملک واپس جانے کے بغیر اپنے ویزا کی تجدید کرنا چاہتے ہیں۔



کالم



مرحوم نذیر ناجی(آخری حصہ)


ہمارے سیاست دان کا سب سے بڑا المیہ ہے یہ اہلیت…

مرحوم نذیر ناجی

نذیر ناجی صاحب کے ساتھ میرا چار ملاقاتوں اور…

گوہر اعجاز اور محسن نقوی

میں یہاں گوہر اعجاز اور محسن نقوی کی کیس سٹڈیز…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے (آخری حصہ)

میاں نواز شریف کانگریس کی مثال لیں‘ یہ دنیا کی…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے

بودھ مت کے قدیم لٹریچر کے مطابق مہاتما بودھ نے…

جنرل باجوہ سے مولانا کی ملاقاتیں

میری پچھلے سال جنرل قمر جاوید باجوہ سے متعدد…

گنڈا پور جیسی توپ

ہم تھوڑی دیر کے لیے جنوری 2022ء میں واپس چلے جاتے…

اب ہار مان لیں

خواجہ سعد رفیق دو نسلوں سے سیاست دان ہیں‘ ان…

خودکش حملہ آور

وہ شہری یونیورسٹی تھی اور ایم اے ماس کمیونی کیشن…

برداشت

بات بہت معمولی تھی‘ میں نے انہیں پانچ بجے کا…

کیا ضرورت تھی

میں اتفاق کرتا ہوں عدت میں نکاح کا کیس واقعی نہیں…