نیوزی لینڈ میں3 ماہ کے بعد کرونا سے پہلی موت حکام کی نیندیں اڑ گئیں ، مرنے والے کی عمر کتنی تھی؟جانئے

  ہفتہ‬‮ 5 ستمبر‬‮ 2020  |  11:39

ویلنگٹن (این این آئی)نیوزی لینڈ میں حکام نے اعلان کیا ہے کہ ملک میں تین ماہ سے زیادہ عرصے کے بعد ایک بار پھر کرونا وائرس کے سبب کسی شخص کی موت کا اندارج ہوا ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق وزارت صحت کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ فوت ہونے والے شخص کی عمر 50 برس ہے۔ اگست میں کرونا سے متاثر ہونے والا یہ شہری آکلینڈ کے میڈلمور ہسپتال میں زیر علاج تھا۔اس طرح نیوزی لینڈ میں اس وبائی مرض سے متاثر ہو کر موت کا شکار ہونے والے افراد کی مجموعی تعداد 23 ہو گئی


ہے۔ یاد رہے کہ اس سے قبل آخری وفات کا اندراج 24 مئی کو ہوا تھا۔آکلینڈ شہر میں اب تک کرونا وائرس کے کل 152 مصدقہ کیس سامنے آ چکے ہیں۔واضح رہے کہ آکلینڈ میں کرونا وائرس کے سبب نافذ العمل لاک ڈان گذشتہ اتوار کی شام ختم کیا گیا تھا۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

کارٹرفارمولا

جمی کارٹر امریکا کے 39ویں صدر تھے‘ یہ 1977ءسے 1981ءتک دنیا کی سپر پاور کے سربراہ رہے‘ یہ 1924ءمیں جارجیا کے چھوٹے سے گاﺅں پلینز میں پیدا ہوئے ‘ زمین دار فیملی کے ساتھ تعلق تھا‘ والد مونگ پھلی اگاتے تھے‘ جوانی میں نیوی جوائن کر لی‘ والد کے انتقال کے بعد کھیتی باڑی شروع کر دی‘یہ بھی ....مزید پڑھئے‎

جمی کارٹر امریکا کے 39ویں صدر تھے‘ یہ 1977ءسے 1981ءتک دنیا کی سپر پاور کے سربراہ رہے‘ یہ 1924ءمیں جارجیا کے چھوٹے سے گاﺅں پلینز میں پیدا ہوئے ‘ زمین دار فیملی کے ساتھ تعلق تھا‘ والد مونگ پھلی اگاتے تھے‘ جوانی میں نیوی جوائن کر لی‘ والد کے انتقال کے بعد کھیتی باڑی شروع کر دی‘یہ بھی ....مزید پڑھئے‎