غرب، مہنگائی، کرنسی تباہ ہو گئی بیروت دھماکوں کے بعد انقلاب کے نعرے لبنان کے وزیراعظم کابینہ سمیت مستعفی

  پیر‬‮ 10 اگست‬‮ 2020  |  20:34

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)لبنان کے وزیراعظم حسان دیاب نے بیروت دھماکے کے کوئی ایک ہفتے کے بعد اپنی کابینہ سمیت استعفا دے دیا ہے۔انھوں نے قبل ازیں صدر میشال عون کو مطلع کردیا تھا کہ وہ بہت جلد اپنے عہدے سے مستعفی ہورہے ہیں۔العربیہ کی کی رپورٹ کے مطابق لبنان کےمقامی میڈیا نے وزیراعظم کے بیروت میں تباہ کن دھماکے کے بعد مستعفی ہونے کی اطلاعات دی ہیں۔گذشتہ چند روز میں ان کی کابینہ میں شامل بعض وزراء اور پارلیمان کے ارکان پہلے ہی مستعفی ہوچکے ہیں۔حسان دیاب کے زیر قیادت نئی کابینہ جنوری میں تشکیل پائی تھی اور اس


کو ایران نواز طاقتور شیعہ ملیشیا حزب اللہ اور اس کے اتحادیوں کی حمایت حاصل ہے۔ سیاسی ذرائع کے مطابق بہت سے وزراء نے مستعفی ہونے کے ارادے کا اظہار کیا تھا۔اس کے بعد کابینہ نے اجتماعی استعفا پیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔بیروت کی بندرگاہ پر ایک گودام میں گذشتہ منگل کو تباہ کن دھماکے کے بعد سے احتجاجی مظاہرے جاری ہیں۔لبنانی شہری حکمران طبقے کو اس واقعے کا ذمے دار قرار دے رہے ہیں اور وہ عوام کے جان ومال کے تحفظ کے لیے کوئی خاطرخواہ انتظامات نہ کرنے پر حکومت کے خلاف سراپا احتجاج بنے ہوئے ہیں۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

ہم قدم ارطغرل کے مزار پر

عاطف نواز راولپنڈی کی مکہ مارکیٹ میں دوپٹوں کا کام کرتا ہے‘ پندرہ سال کی عمر میں کام شروع کیا اور آہستہ آہستہ اس کام کا ماہر ہوتا چلا گیا‘ پندرہ سال قبل والد جگر کے عارضے کا شکار ہو گیا‘ انہیں ہیپاٹائیٹس سی ہوا اور وائرس آہستہ آہستہ ان کا جگر کھانے لگا‘ عاطف نے یہ 15 ....مزید پڑھئے‎

عاطف نواز راولپنڈی کی مکہ مارکیٹ میں دوپٹوں کا کام کرتا ہے‘ پندرہ سال کی عمر میں کام شروع کیا اور آہستہ آہستہ اس کام کا ماہر ہوتا چلا گیا‘ پندرہ سال قبل والد جگر کے عارضے کا شکار ہو گیا‘ انہیں ہیپاٹائیٹس سی ہوا اور وائرس آہستہ آہستہ ان کا جگر کھانے لگا‘ عاطف نے یہ 15 ....مزید پڑھئے‎