پانی میں24منٹ33 سیکنڈ سانس روکنے کا عالمی ریکارڈ بنالیا گیا یہ ریکارڈ بنانے والے کا تعلق کس ملک سے ہے ؟

  منگل‬‮ 30 مارچ‬‮ 2021  |  17:57

لندن (این این آئی)کروشیا سے تعلق رکھنے والے ایک غوطہ خور نے پانی میں سانس روک کر رکھنے کا اپنا ہی ریکارڈ توڑ دیا ہے۔سبوتا نامی غوطہ خور جس کی عمر54سال ہے، نے پانی میں24منٹ33سیکنڈ تک سانس روک کر رکھا،اس سے قبل ان کا ریکارڈ24منٹ11  سیکنڈ تھا۔یہ ریکارڈ انہوں نے کروشیا کے شہرسساک میں بنایا اور اس سے قبل انہوں نے ڈاکٹرز کی ہدایت کے مطابقٹریننگ بھی لی تھی۔انہوں نے عالمی ریکارڈ قائم کرنے سے پہلے مختلف قسم کی مشقیں کی جن کی مدد سے ان کے جسم میں اندرونی طور پر آکسیجن پیدا کرنے کی صلاحیت پیدا ہوئی۔غوطہ خوری


سے قبل وہ باڈی بلڈنگ کرتے تھے۔ برسوں کی ٹریننگ کے بعد انہوں نے اپنے جسم کو ٹرین کیا ہے کہ وہ دماغ اور دیگر حصوں کو بالکل آہستہ رفتار میں آکسیجن فراہم کرے۔پانی کے باہر وہ عالمی ریکارڈ سے دگنے وقت تک اپنا سانس روک سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا مجھے معلوم تھا کہ یہ ایک خطرناک کام ہے تاہم میں چاہتا تھا کہ اپنا ہی ریکارڈ توڑوں۔انہوں نے یہ خطرہ اس لیے بھی مول لیا اپنے علاقے کیلئے کچھ فنڈز جمع کر سکیں جو گزشتہ سال دسمبر میں زلزلے سے متاثر ہوا تھا۔پانی میں غوطہ لگانے سے قبل انہوں نے کہا میں ڈاکٹرز کی ہدایت کے مطابق اپنی طرف سے بہترین کرنے جا رہا ہوں اور یہ آپ لوگوں کی مدد سے ممکن ہوا۔‎


زیرو پوائنٹ

اللہ ہی رحم کرے

مغل بادشاہ شاہ جہاں کے پاس ایک ترک غلام تھا‘ وہ بادشاہ کو پانی پلانے پر تعینات تھا‘ سارا دن پیالہ اور صراحی اٹھا کر تخت کے پاس کھڑا رہتا تھا‘ بادشاہ اس کی طرف دیکھتا تھا تو وہ فوراً پیالہ بھر کرپیش کر دیتا تھا‘ وہ برسوں سے یہ ڈیوٹی سرانجام دے رہا تھا اور بڑی حد تک بادشاہ ....مزید پڑھئے‎

مغل بادشاہ شاہ جہاں کے پاس ایک ترک غلام تھا‘ وہ بادشاہ کو پانی پلانے پر تعینات تھا‘ سارا دن پیالہ اور صراحی اٹھا کر تخت کے پاس کھڑا رہتا تھا‘ بادشاہ اس کی طرف دیکھتا تھا تو وہ فوراً پیالہ بھر کرپیش کر دیتا تھا‘ وہ برسوں سے یہ ڈیوٹی سرانجام دے رہا تھا اور بڑی حد تک بادشاہ ....مزید پڑھئے‎