بیرون ملک اثاثوں کو واپس لانے کا کوئی قانون نہیں ہے،پاکستان نے ٹی ٹیز کی اجازت دی ،شبر زید کے حیران کن انکشافات

  جمعہ‬‮ 15 جنوری‬‮ 2021  |  12:50

کراچی(این این آئی)فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر)کے سابق چیئرمین شبر زیدی نے کہا ہے کہ بیرون ملک اثاثوں کو واپس لانے کا کوئی قانون نہیں ہے،سوال یہ ہے کہ 120 بلین ڈالر بیرون ملک کیسے چلے گئے؟،ایک انٹرویوکے دوران انہوں نے کہاکہ سابق صدر پرویز مشرف سیاسی پریشر میں آکر فارن کرنسی اکائونٹ پروٹیکشن قانون لائے، یہ قانون کسی کتابمیں نہیں ہے،پیسہ لائیں یا لے کر جائیں، پہلے اسٹیٹ بینک نہیں پوچھ رہا تھا۔انہوں نے کہاکہ پاکستان میں آج تک حوالہ کے بارے فیصلہ ہی نہیں ہو سکا، بھارت نے حوالہ کو ختم کیا۔ پاکستان نے تو ٹی


ٹیز کی اجازت دی تھی۔ عدالت عالیہ کے کچھ فیصلے ہمیں بہت پیچھے لے گئے جب سپریم کورٹ اسٹیمپ لگا دے تو پھر میں کیا کر سکتا ہوں؟


زیرو پوائنٹ

میرے دو استاد

سنتوش آنند 1939ء میں سکندر آباد میں پیدا ہوئے‘ یہ بلند شہر کا چھوٹا سا قصبہ تھا‘ فضا میں اردو‘ تہذیب اور جذبات تینوں رچے بسے تھے چناں چہ وہاں کا ہر پہلا شخص شاعر اور دوسرا سخن شناس ہوتا تھا‘ سنتوش جی ان ہوائوں میں پل کر جوان ہوئے‘ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے لائبریری سائنس کی ڈگری لی ....مزید پڑھئے‎

سنتوش آنند 1939ء میں سکندر آباد میں پیدا ہوئے‘ یہ بلند شہر کا چھوٹا سا قصبہ تھا‘ فضا میں اردو‘ تہذیب اور جذبات تینوں رچے بسے تھے چناں چہ وہاں کا ہر پہلا شخص شاعر اور دوسرا سخن شناس ہوتا تھا‘ سنتوش جی ان ہوائوں میں پل کر جوان ہوئے‘ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے لائبریری سائنس کی ڈگری لی ....مزید پڑھئے‎