کھلاڑی امن کے سفیر ہوتے ہیں ان کی کھیل کے میدان میں حوصلہ افزائی ضرور کرنی چاہئے ٗمیاں اسلم

18  ستمبر‬‮  2017

اسلام آباد (این این آئی)سابق رکن قومی اسمبلی اور پاکستان ویٹ لیفٹنگ فیڈریشن کے صدر میاں محمد اسلم نے کہا ہے کہ کھلاڑی امن کے سفیر ہوتے ہیں ان کی کھیل کے میدان میں حوصلہ افزائی ضرور کرنی چاہئے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز اسلام آباد فٹ سال ایسوسی ایشن کے زیراہمتام اسلام آباد فٹ سال چمپئن شپ کی اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کئی ٗاس موقع پر

پاکستان فٹ سال فیڈریشن کے سیکرٹری جنرل عدنان ملک، اسلام آبادسٹوڈنٹس اولمپک ایسوسی ایشن کے صدر رانا تنویراحمد، اسلام آباد فٹ سال ایسوسی ایشن عدنان سمیع، اسلام آباد سکولز سپورٹس ایسوسی ایشن کے صدر آصف ملک، پاکستان سپورٹس فیڈریشن کے جنرل سیکرٹری کے سیکرٹری جنرل معین الدین، اسلام آباد فٹ بال کلب کے سابق کپتان اور ہیڈسٹارٹ سکول کے کوچ نیک محمد کے علاوہ شائقین کی کثیر تعداد بھی موجود تھی، میاں اسلم نے کہا کہ تعلیمی اداروں میں کھیلوں کا انعقاد خوش آئندہ ہے جس سے ملک میں کھیلوں کا معیار بہتر ہو سکتا ہے اورصحت مند معاشرے کے لئے بھی کھیلوں کا انعقاد ضروری ہے، انہوں نے کہا کہ کھیلوں کے انعقاد سے ہماری نوجوان نسل کئی مختلف بیماریوں سے بچ سکتی ہے، انہوں نے کہا کہ کھیلوں کو سہولیات فراہم کر نا حکومت اور فیڈریشنوں کی ذمہ داری ہے،چمپئن شپ میںخواتین کے فائنل میچ میں ہیڈسٹارٹ سکول نے آئی سی اے ایس کو 3-2 گول سے ہرا کر چمپئن ہونے کا اعزاز حاصل کیا، ہیڈسٹارٹ سکول کی طرف سے حفصہ ناصر نے دو اور سفا عظیم نے ایک گول جبکہ آئی سی اے ایس کی جانب سے ایمان اور وائریہ نے ایک، ایک گول کیا،چمپئن شپ میں خواتین کے ایونٹ میں 11 ٹیموں نے حصہ لیا۔

موضوعات:



کالم



مرحوم نذیر ناجی(آخری حصہ)


ہمارے سیاست دان کا سب سے بڑا المیہ ہے یہ اہلیت…

مرحوم نذیر ناجی

نذیر ناجی صاحب کے ساتھ میرا چار ملاقاتوں اور…

گوہر اعجاز اور محسن نقوی

میں یہاں گوہر اعجاز اور محسن نقوی کی کیس سٹڈیز…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے (آخری حصہ)

میاں نواز شریف کانگریس کی مثال لیں‘ یہ دنیا کی…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے

بودھ مت کے قدیم لٹریچر کے مطابق مہاتما بودھ نے…

جنرل باجوہ سے مولانا کی ملاقاتیں

میری پچھلے سال جنرل قمر جاوید باجوہ سے متعدد…

گنڈا پور جیسی توپ

ہم تھوڑی دیر کے لیے جنوری 2022ء میں واپس چلے جاتے…

اب ہار مان لیں

خواجہ سعد رفیق دو نسلوں سے سیاست دان ہیں‘ ان…

خودکش حملہ آور

وہ شہری یونیورسٹی تھی اور ایم اے ماس کمیونی کیشن…

برداشت

بات بہت معمولی تھی‘ میں نے انہیں پانچ بجے کا…

کیا ضرورت تھی

میں اتفاق کرتا ہوں عدت میں نکاح کا کیس واقعی نہیں…