’’اسمگلروں کی گرفتاری کیلئے وزیراعظم ہائوس پر چھاپہ مارا جائے ‘‘ آٹا بحران کیوں کیسے اور کس نے پیدا کیا، کس کس حکومتی شخصیت نے گندم، چینی پر اربوں کمائے ؟آٹا چینی سکینڈل چھپا کر وزیراعظم نے کیا کیا؟ تہلکہ خیز دعویٰ نے ہلچل مچا دی

  جمعہ‬‮ 21 فروری‬‮ 2020  |  14:29

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قائد حزب اختلاف شہبازشریف نے کہا ہے کہ آٹا چینی سکینڈل پر حکومتی خاموشی اعتراف جرم ہے،روزنامہ جنگ میں شائع رپورٹ کے مطابق تحقیقاتی رپورٹ چھپا کر عمران خان نے آٹاچینی سکینڈل میں ملوث اپنے دوستوں کو این آر او دیا ہے،اسمگلروں کی گرفتاری کیلئے وزیراعظم ہائوس پر بھی چھاپہ مارا جائے، اپنے بیان میں اپوزیشن لیڈر نے کہا کہآٹاچینی میں کس نے کمائی کی؟ یہ بحران کیوں پیدا ہوا؟ ان سوالات کا اب تک جواب نہیں آیا،پابندی تھی توبرآمد کیوں ہوئی؟ کس کس حکومتی شخصیت نے گندم چینی


پر اربوں کمائے، قوم جواب کی منتظر ہے، تحقیقاتی رپورٹ سامنے نہ آنے سے حکومتی شخصیات کا ملوث درست ثابت ہوا۔آٹے چینی کے سمگلروں کی گرفتاری کیلئے وزیراعظم ہائوس پر بھی چھاپہ مارا جائے تو ساف پتہ چل جائے گا، رپورٹ چھپائی جائے تو صاف ظاہر ہے کہ حکومت کے ہاتھ صاف نہیں ، آٹے ، گندم اور چینی کی چوری ، ذخیرہ اندوزی اور منافع خوری میں ملوث کرداروں کو سامنے لانا ہو گا ، قوم کو آٹا ، چینی ، ٹیکس ، قرض چوری کا حساب دیئے بغیر آپ کی جان خلاصی نہیں ہو گی ، رپورٹ سامنے نہ لا کر نیازی صاحب نے مجرموں کا ساتھی ہونے کی تصدیقی کر دی ۔


موضوعات: